حکومتی احکامات نظرانداز، ”نادرا“ نے ملازمین کا 10فیصد اضافی الاؤنس واپس لے لیا

  حکومتی احکامات نظرانداز، ”نادرا“ نے ملازمین کا 10فیصد اضافی الاؤنس واپس ...

  



لاہور(نیوز رپورٹر)نادرا ڈیپارٹمنٹ نے اپنے ہی ڈیپارٹمنٹ کے ملازمین پر مہنگائی بم گرا دیا اور حکومتی احکامات کو ہوا میں اڑا دیا۔نادرا ڈیپارٹمنٹ نے حکومت کے اعلان کردا تنخواہوں میں 10% ایڈھاک الاؤنس2019 اضافہ واپس لے کر ایک طرف حکومتی احکامات کو ہوا میں اڑا دیا تو دوسری طرف ملازمین پر مہنگائی بم گرا دیا ہے۔ ملازمین نے اپنے شدید ردعمل کا اظہار کیا ہے اور اسے ملازمین کا معاشی قتل قرار دیا ہے۔انکا کہنا ہے کہ انتہائی کم تنخواہ کی وجہ سے پہلے ہی گزر بسر انتہائی مشکل سے ہو رہا تھا اس پرڈیپارٹمنٹ کا غلط اقدام ملازمین کو خودکشی پر مجبور کر رہا ہے۔ ملازمین نے وزیراعظم پاکستان وزیر داخلہ اور چیف جسٹس سے فوری نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔ اور چیئرمین نادرا سے 2 ماہ کی کٹوتی کو بقایا جات کے ساتھ لگانے کا بھی مطالبہ کیا ہے۔ ایمپلائز یونین کا کہنا ہے کہ اگر ڈیپارٹمنٹ نے اپنے غلط احکامات واپس نہ لئے اور ملازمین کا معاشی قتل کرنے کا سلسلہ نہ روکا تو ایمپلائز یونین کورٹ سے رجوع کرے گی۔

مزید : میٹروپولیٹن 1