شائقین کے بندر کہنے پرسیاہ فام فٹبالر نے میچ کا بائیکاٹ کر دیا

شائقین کے بندر کہنے پرسیاہ فام فٹبالر نے میچ کا بائیکاٹ کر دیا

  



روم(آئی این پی) اٹلی فٹبال لیگ کے میچ کے دوران سیاہ فام فٹبالر ماریو بالو ٹیلی نے تماشائیوں کی جانب سے بندر کہے جانے پر احتجاجا نہ صرف شائقین کے اسٹینڈ کی طرف فٹبال کو کک لگا کر پھینکا بلکہ میچ کا بائیکاٹ کرتے ہوئے میدان سے بھی باہر آگئے۔ بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق بریشا کلب کے سیاہ فام اسٹار فٹبالر ماریو بالو ٹیلی پر اٹلی فٹبال لیگ کے ایک میچ کے دوران نسل پرستانہ جملے کسے گئے، وہ گیند کی تلاش میں جب مخالف ٹیم کے شائقین کی طرف جاتے تو بندر بندر کی آوازیں بلند ہوتی رہیں۔سیاہ رنگت اور ناک نقشے کے باعث ان پر نسل پرستانہ جملوں اور بدسلوکی پر ایک موقع پر سیاہ فام کھلاڑی غصے میں آگئے اور فٹبال کو کک لگا کر شائقین کے اسٹینڈ پر پھینکا اور بھر احتجاجا میچ چھوڑ کر میدان سے باہر آگئے جس پر میچ کئی منٹ تک رکا رہا۔ماریو بالو ٹیلی کی ٹیم کے علاوہ مخالف ٹیم الاس ویرونا کے کھلاڑیوں نے بھی سیاہ فام کھلاڑی سے دل شکنی پر معذرت کی اور حوصلہ افزائی کرتے ہوئے انہیں دوبارہ کھیل شروع کرنے کے لیے منانے لگے۔ اسٹیڈیم کے مائیک سے بھی شائقین کو تنبیہ کی گئی کہ کھیل کے دوران نسل پرستانہ جملے بازی غیرقانونی ہے۔اپنے ساتھیوں اور مخالف ٹیم کے کھلاڑیوں کے کہنے پر ماریو بالو ٹیلی واپس میدان میں آگئے اور میچ کے آخری منٹوں میں ایک گول بھی کر گئے۔ فٹبال لیگ کے دوران نسل پرستانہ رویہ رکھنے کا یہ واقعے دوسرا واقعہ ہے اس سے قبل روما کے شائقین نے نیپولی پر بھی علاقائی منافرت پر مبنی جملے کسے تھے۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی