باکسنگ ٹیلنٹ کی کمی نہیں، حکومت سرپرستی کرے، ناصر تنگ

باکسنگ ٹیلنٹ کی کمی نہیں، حکومت سرپرستی کرے، ناصر تنگ

  



لاہور (سپورٹس رپورٹر) پاکستان باکسنگ فیڈریشن کے سیکرٹری جنرل کرنل (ر) ناصر تنگ نے کہا ہے کہ ملک میں باکسنگ کے ٹیلنٹ کی کمی نہیں بلکہ حکومت اور سپانسر کی سرپرستی کی ضرورت ہے، ان خیالات کا اظہار انہوں نے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ نیشنل گیمز 10 نومبر سے 16 نومبر تک پشاور میں کھیلی جا رہی ہیں اور باکسنگ کے ایونٹ میں ملک بھر سے 13 ٹیمیں حصہ لے رہی ہیں جن میں پاکستان آرمی، پاکستان نیوی، پاکستان ایئرفورس، پاکستان واپڈا، پاکستان ریلوے، ہائر ایجوکیشن کمیشن، اسلام آباد، پنجاب، سندھ، بلوچستان، خیبر پختونخوا، گلگت بلتستان اور آزاد جموں کشمیر شامل ہیں اور کھلاڑی دس کیٹگریز کے مقابلوں میں حصہ لیں گے جن میں 49 کلوگرام، 52 کلوگرام، 56 کلوگرام، 60 کلوگرام، 64 کلوگرام، 69 کلوگرام، 75 کلوگرام، 81 کلوگرام، 91 کلوگرام اور پلس 91 کلوگرام شامل ہیں۔ پاکستان آرمی کے کھلاڑی ایونٹ میں اپنے ٹائٹل کا دفاع کریں گے، انہوں نے کہا کہ ایونٹ میں 14 نومبر کو سیمی فائنل مقابلے جبکہ 15 نومبر کو فائنل مقابلے ہونگے۔ ایک اور سوال کے جواب میں ناصر تنگ نے کہاکہ کوئی بھی کھیل حکومتی اور سپانسر کی سرپرستی کے بغیر ترقی نہیں کرسکتا۔

حکومت اور سپانسر کو باکسنگ کے کھیل پر خصوصی توجہ دینی چاہئے کیونکہ پاکستان نے اولمپک کے علاوہ انٹرنیشنل سطح پر کئی میڈلز حاصل کر رکھے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ساؤتھ ایشین چیمپئن شپ یکم دسمبر سے نیپال کھٹمنڈو میں شروع ہو رہی ہے جس کی تیاری ابھی تک نہیں شروع کی گئی حالانکہ دوسرے ممالک دو، دو سال پہلے ہی بین الاقوامی سطح کے ایونٹ کی تیاری کیلئے تربیتی کیمپ لگا دیتے ہیں، ویمنز باکسنگ کے کھیل میں شرکت کے حوالے سے ایک سوال کے جواب میں کرنل (ر) ناصر تنگ نے کہاکہ باکسنگ کے کھیل میں خواتین کا رحجان دن بدن بڑھ رہاہے اور نیشنل گیمز میں پاکستان باکسنگ فیڈریشن نے پہلی بار ویمنز باکسنگ کے نمائشی مقابلے منعقد کروانے کی منصوبہ بندی تیار کی ہے، گراس روٹ سطح پر باکسنگ کی ترقی کے حوالے سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ تعلیمی اداروں میں باکسنگ کا کھیل کافی مقبولیت اختیار کر گیا ہے اور آل پاکستان انٹر یونیورسٹیز باکسنگ چیمپئن شپ کے مقابلے باقاعدگی سے منعقد ہورہے ہیں اس کے علاوہ ملک میں باکسنگ کی اکیڈمیز بھی کام کر رہی ہیں۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی