ریپڈ کمپیوٹ جی ڈی پی آر پر عملدرآمد کرنے والا پہلا کلاؤڈ سروس پروائیڈر

ریپڈ کمپیوٹ جی ڈی پی آر پر عملدرآمد کرنے والا پہلا کلاؤڈ سروس پروائیڈر

  



لاہور(پ ر)ریپڈ کمپیوٹ جی ڈی پی آر پر عمل درآمد کرنے والا پہلا کلاؤڈ سروس فراہم کرنے والا ادارہ بن گیا ہے۔ اس سلسلے میں ریگولیٹری تقاضوں کے کامیاب نفاذ کیلئے ریپڈ کمپیوٹ اور سائبر سیکورٹی کنسلٹنگ فرم سیکیور بین جو آڈٹ اور کمپلائنس چیکس کی خدمات سرانجام دیتی ہے، کے مابین معاہدے کی تقریب کا انعقاد ہوا۔ اس کامیابی کے ساتھ ریپڈ کمپیوٹ ملک کے ان چند اداروں میں شامل ہو گیا ہے جو جی ڈی پی آر سے مطابقت رکھتے ہیں۔ یہ اقدام کلاؤڈ فراہم کرنے والوں کی جامع سیکورٹی حکمت عملی کی توثیق کرتا ہے اور اسے ان چند پاکستانی اداروں میں شامل کرتاہے جو یورپی کمیشن کی جانب سے ذاتی معلومات کی سیکورٹی اور سلامتی کو کنٹرول کرنے والے سخت جی ڈی پی آر قوانین پر عمل پیرا ہیں۔یورپی یونین کی جانب سے 2016ء میں اپنائی گئی دی جنرل ڈیٹا پروٹیکشن ریگولیشن (جی ڈی پی آر) آج دنیا میں ڈیٹا کی پوشیدگی کے بارے میں قانون سازی کا واحد انتہائی اہم حصہ ہے۔ یہ یورپی یونین کے ڈیٹا سبجیکٹس پوشیدگی کے مرکزی حق اور اس کے ذاتی ڈیٹا کو تحفظ فراہم کرتا ہے اور ڈیٹا پروٹیکشن، سیکورٹی اور کمپلائنس کی بھرپور ضرورت اور معیارات پیش کرتا ہے۔ RapidCompute کے منیجنگ ڈائریکٹر عمران خان نے کہا کہ بدقسمتی سے پاکستان میں ڈیٹا کے تحفظ کو نظر انداز کیا گیا جو گزشتہ چند سالوں کے دوران رپورٹ کی گئی متعدد خامیوں کا واضح ثبوت ہے۔ بہت سی اداروں میں ڈیٹا کی پوشیدگی اور رازداری کے بارے میں تحفظات کے ساتھ ریپڈ کمپیوٹ اپنے صارفین اور شراکت داروں کو اس بات کا یقین دلانا چاہتا ہے کہ وہ سیکورٹی حکمت عملی کیلئے پرعزم ہے۔ 

انہوں نے کہا کہ پہلے سے ISO 27001 اور PCIDSS تصدیق شدہ ہونے کی حیثیت سے جی ڈی پی آر کمپلائنس ریپڈ کمپیوٹ کے عوامل کو یقینی بنانے میں لازمی قدم تھا اور یہ اعلیٰ ترین ممکنہ معیارات کے مطابق صارفین کے ڈیٹا کی پوشیدگی کی یقین دہانی کرتا ہے۔ 

یورپی کمیشن کی جانب سے 2016ء میں باضابطہ طور پر عمل میں لائی گئی جی ڈی پی آر نے دنیا بھر میں مستقل طور پر اپنانے کا عمل اپنایااور تازہ ترین اعداد و شمار ظاہر کرتے ہیں کہ ایک تہائی امریکی اداروں نے خود کو جی ڈی پی آر معیار سے ہم آہنگ قرار دیا ہے۔ تاہم ریگولیٹری ماحول کی پیچیدگی جیسی رکاوٹوں پر مبنی آئی ٹی نظاموں کو اپنانے میں دشواری کے نتیجہ میں عمل درآمد متوقع سے زیادہ سست ہے۔

ریپڈکمپیوٹ کے منیجر انفوسیک مسٹر حسن ریاض نے بتایا کہ کیوں ریپڈ کمپیوٹ جیسے ادارے جو ڈیٹا پروٹیکشن اور پرائیویسی ریگولیشن کو ایک موقع کی حیثیت سے دیکھتے ہیں، طویل عرصہ کیلئے ایک اہم مسابقتی فائدہ حاصل کریں گے۔ نہ صرف وہ کمپنیاں جو ڈیٹا کے شگاف کے خطرے سے دوچار رہتی ہیں اور مالی طور پر اور ساکھ کے لحاظ سے نقصان سے دوچار ہیں وہ ان فوائد کو بھی نہیں دیکھ رہیں جو یہ معیار سے ہم آہنگی فراہم کر سکتی ہے۔ صارف کے بہتر اعتماد سے لے کر صارف کی بڑھتی ہوئی مصروفیات اور آمدن میں اضافہ تک تحقیق سے پتہ چلتا ہے کہ جی ڈی پی آر سے ہم آہنگ ادارے غیر ہم آہنگ اداروں کے مقابلہ میں اوسطاً 20 فیصد زیادہ بہتر کام کرتے ہیں۔ 

مزید : کامرس