" نواز شریف کے ڈی این اے ٹیسٹ سے بیماری کی تشخیص جاسکتی ہے،جینیٹک ٹیسٹ کا فیصلہ ۔ ۔ ۔" شریف میڈیکل سٹی کے ڈاکٹروں سے ملاقات کے بعد ڈاکٹر یاسمین راشد نے اندر کی بات بتادی

" نواز شریف کے ڈی این اے ٹیسٹ سے بیماری کی تشخیص جاسکتی ہے،جینیٹک ٹیسٹ کا ...

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن )شریف میڈیکل سٹی ہسپتال کے ڈاکٹرز نے وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد اور میڈیکل بورڈ سے ملاقات کی،شریف میڈیکل سٹی ہسپتال کے ڈاکٹرز سے نواز شریف کی رپورٹس اور تفصیلات شئیر کر دی گئی ہیں۔

نجی ٹی وی چینل اے آر وائے کے مطابق ڈاکٹر صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد کہتی ہیں کہ نواز شریف میڈیکل سٹی ہسپتال کے ڈ اکٹرز نے میڈیکل بورڈ سے ملاقات کی،جہاں ان کو نواز شریف کی صحت اور علاج و معالجہ سے متعلق آگاہ کیا گیا،اور میڈیکل رپورٹس شئیر کی گئیں۔ ان کا کہنا ہے کہ نوا ز شریف کی بیماری نئی نہیں پرانی ہے،اس لیے ان کی حالت کو مستقل رکھنے کی پلیٹ لیٹس بننا ضروری ہے ،نواز شریف کا بون میرو خود سے پلیٹ لیٹس بنا رہا ہے۔

ڈاکٹر یاسمین راشد نے کہا کہ ان کی حالت خطرے سے باہر ہے، نواز شریف کے ڈی این اے ٹیسٹ سے بیماری کی تشخیص جاسکتی ہے،جینیٹک ٹیسٹ کا فیصلہ میڈیکل بورڈ ہی کر سکتاہے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور