حکومت اور جے یو آئی کے درمیان اہم بات چیت کا امکان،کن امور پر بڑی پیش رفت ہو سکتی ہے؟تفصیلات آ گئیں

حکومت اور جے یو آئی کے درمیان اہم بات چیت کا امکان،کن امور پر بڑی پیش رفت ہو ...
حکومت اور جے یو آئی کے درمیان اہم بات چیت کا امکان،کن امور پر بڑی پیش رفت ہو سکتی ہے؟تفصیلات آ گئیں

  



اسلام آباد(صباح نیوز)حکومت اورجمعیت علمائےاسلام(ف)کےدرمیان بعض  مطالبات کےضمن میں اہم معاہدے پربات چیت متوقع ہے،بعض مطالبات کےحوالےسےتحریری ضمانت لی جاسکتی ہے،درمیانی راستہ نکالنے کےسلسلے میں حکومت  آئینی اسلامی دفعات،اہم خارجہ وانتخابی امور کےحوالے  سےتحریری ضمانت دے سکتی ہے،بات چیت میں پیش رفت پر 12ربیع الاول کو  ممکنہ معاہدے کی تفصیلات جاری کا بھی امکان ہے ۔

ذرائع کے مطابق جمعیت علمائے اسلام (ف) کے بعض مطالبات اور ایک اہم معاہدے پر بات چیت کا امکان ظاہر کیا گیا ہے ۔ان میں آئین کی اسلامی دفعات،  ناموس رسالت ﷺ ایکٹ ، قادیانیوں کو غیر مسلم قرار دینے کے آئینی آرٹیکل کو نہ کسی صورت نہ چھیڑنے کی تحریری ضمانت پر گفت و شنید کا امکان ہے۔ اس طرح اہم خارجہ امور آئین کی حکمرانی پارلیمنٹ کی بالا دستی اہم انتخابی اصلاحات بالخصوص ووٹنگ ڈے کے انتظامات کے حوالے سے اہم امور بھی شامل ہیں۔ذرائع ان ہی معاملات کو درمیانی راستہ قرار دے رہے ہیں یادرہے کہ  درمیانی راستہ نکالنے کا حال ہی میں وزیردفاع پرویز خٹک کی طرف سے اشارہ بھی دیا گیا ہے جب کہ جے یو آئی اپوزیشن کے دیگر جماعتوں کے تعاون سے اپنے تحریک کو جاری بھی رکھے گی اضلاع تک اس کو وسعت دے دی جائے گی۔

مزید : قومی