زرعی ترقی اور کاشت کاروں کی خوشحالی پنجاب حکومت کی اولین ترجیح ہے

زرعی ترقی اور کاشت کاروں کی خوشحالی پنجاب حکومت کی اولین ترجیح ہے

لاہور(کامرس رپورٹر)صوبائی وزیرزراعت ڈاکٹر فرخ جاوید نے کہا ہے کہ کسان پیکیج میں رکاوٹیں ڈالنے والے کس منہ سے کسانوں کے حقوق کا نعرہ لگا رہے ہیں۔سیاسی مفادات کی خاطر کسانوں کے معاشی قتل کے ذمہ داروں کو عوام کبھی معاف نہیں کریں گے۔ زرعی ترقی اور کاشت کاروں کی خوشحالی پنجاب حکومت کی اولین ترجیح ہے۔ حکومت پنجاب کی کسان دوست پالیسیوں کے نتیجہ میں گذشتہ چند سالوں سے اہم فصلوں کی فی ایکڑپیداوار میں نمایاں اضافہ ہواہے۔ان خیالات کا اظہارصوبائی وزیرزراعت ڈاکٹر فرخ جاوید نے گزشتہ روز زرعی پیکیج کے حوالے سے منعقدہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ ڈاکٹر فرخ جاوید نے کہا کہ کسان پیکیج سے چھوٹے کاشتکاروں کو آسان شرائط پر قرضوں کی فوری فراہمی سے ان کی حوصلہ افزائی ہوگی۔ پنجاب حکومت نے کسانوں کو 30ہزار سے زائدٹریکٹرفراہم کیے ہیں جن پر6ارب روپے سبسڈی دی گئی ہے جبکہ ایک سو پچاس ارب روپے کی لاگت سے دور دراز علاقوں سے کسانوں کی منڈیوں تک رسائی کے لیے سڑکوں کی تعمیر کا سلسلہ جاری ہے۔ زرعی شعبہ کو جدید ٹیکنالوجی سے لیس کرنے اور پیداواریت میں اضافہ کے لیے زرعی مشینری پر ٹیکس میں واضع کمی کی گئی ہے۔ اسی طرح بجلی کے زرعی بلوں پر فی یونٹ ریٹ میں کمی اور سبسڈی پرسولر ٹیوب ویلوں کی فراہمی سے کسانوں اور کاشتکاروں کو معاشی ریلیف ملا ہے۔

صوبائی وزیر زراعت نے کہا ہے کہ کسان پیکیج پر تنقید کرنے والوں کے پاس کسانوں کی بہتری کے لیے کوئی ٹھوس لائحہ عمل نہیں ہے۔ پنجاب حکومت ہر سطح پر کسانوں اور کاشتکاروں کے مسائل حل کرنے اور انہیں زیادہ سے زیادہ ریلیف فراہم کرنے کے لیے انقلابی اقدامات کررہی ہے۔ ڈاکٹرفرخ جاوید نے کہا کہ ضرورت اس امر کی ہے کہ زراعت کے شعبہ کو مزید بہتر بنانے اور پیداواریت میں اضافہ کے لیے جدید ٹیکنالوجی کے استعمال کوفروغ دیا جائے۔ منڈیوں میں سرمایہ کاروں کی اجارہ داری میں کمی سے کسانوں کو بہتر قیمت کی ادائیگی میں مدد ملے گی۔ پنجاب حکومت کسانوں ، کاشتکاروں اور تاجروں کے مسائل ترجیجی بنیادوں پر حل کررہی ہے۔

مزید : کامرس