چارسدہ میں 150گھوسٹ ملازمین کا با اثر شخصیات کے گھروں میں کام کرنے کا انکشاف

چارسدہ میں 150گھوسٹ ملازمین کا با اثر شخصیات کے گھروں میں کام کرنے کا انکشاف

چارسدہ(بیورورپورٹ) تحصیل کونسل چارسدہ میں قومی وطن پارٹی کے پارلیمانی لیڈر کرامت شاہ اور جماعت اسلامی کے پارلیمانی لیڈر ہارون خان نے انکشاف کیا کہ تحصیل میونسپل ایڈ منسٹریشن کے 150گھوسٹ ملازمین علاقے کے باآثر شخصیات کے گھروں پر کام کر رہے ہیں لیکن تنخواہیں ٹی ایم اے سے لے رہے ہیں جس کی وجہ سے مالی بحران کا شکار تحصیل میونسل ایڈ منسٹریشن پر مزید مالی بوجھ پڑ رہا ہے جبکہ دوسری جانب عوام کو فراہم کی جانے والے سروسز بھی متاثر ہو رہے ہیں ، ٹی ایم اے کے افتتاحی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ گھوسٹ ملازمین قومی خزانے پر بوجھ ہیں جو ملازمین ڈیوٹی نہیں دیتے ان کے خلاف بلا امتیاز کاروائی کی جائے ۔ہم عوام کے منتخب نمائندے ہیں اور عوام کے حقوق پر ڈاکہ دالنے والوں کا ضرور مخاسبہ کریں گے ۔ انہوں نے کہا کہ ٹی ایم اے کے قیمتی اراضی پر علاقے کے با آثر شخصیات قابض ہیں اور کروڑوں روپے کے اراضی پر پلازے بنائے گئے ہیں لیکن آفسوس کی بات ہے کہ آج تک قبضہ مافیا کے خلاف کسی قسم کی کاروائی نہیں ہو رہی۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ قبضہ مافیا کے خلاف کاروائی کر کے قیمتی اراضی واگزار کئے جائیں اور ان پر ٹی ایم اے پلازے اور مارکیٹ بنائیں جائے تاکہ ٹی ایم اے کی آمدنی میں اضافہ کیا جاسکے۔ انہوں نے یہ بھی مطالبہ کیا کہ چارسدہ تحصیل بازار اور علاقہ علاقہ سرڈھیری میں صفائی کی صورت حال کو بہتر بنانے کیلئے اقدامات کیئے جائیں اور ناجائز تجاوزات کے خلاف باقاعدہ مہم کا آغاز کیا جائے ۔

مزید : پشاورصفحہ اول