ورلڈ بینک نے چین کے بارے میں ایسا اقرار کرلیا کہ سن کر مودی شرم سے پانی پانی ہوجائیں گے

ورلڈ بینک نے چین کے بارے میں ایسا اقرار کرلیا کہ سن کر مودی شرم سے پانی پانی ...
ورلڈ بینک نے چین کے بارے میں ایسا اقرار کرلیا کہ سن کر مودی شرم سے پانی پانی ہوجائیں گے

  


نیویارک (نیوز ڈیسک)ورلڈ بینک کی جانب سے اتوار کے روز جاری کی گئی ایک انتہائی اہم رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ گزشتہ 25 سال کے دوران دنیا میں شدید غربت کی شرح 35 فیصد سے کم ہوکر 11 فیصد رہ گئی ہے، اور اس حیرت انگیز کامیابی کا سہراچین کے سر ہے۔

ورلڈ بنک نے اپنی رپورٹ میں اعتراف کیا ہے کہ 1978ءمیں کی جانے والی اصلاحات کے بعد سے چین نے حیرت انگیز طور پر غربت پر قابو پایا ہے۔ اس عرصے کے دوران 80 کروڑ سے زائد افراد کو غربت سے نکال کر باعزت زندگی گزارنے کے قابل بنایا گیا ہے ۔ لوگوں کی اتنی بڑی تعداد کو غربت سے نکالنے پر نہ صرف چین میں غربت کی شرح میں کمی آئی ہے بلکہ اس کے اثرات مجموعی عالمی اعدادوشمار پر بھی مرتب ہوئے ہیں۔ +

داعش کے سربراہ کو تین ساتھیوں سمیت زہر دینے کی اطلاعات، نامعلوم مقام پر منتقل

ورلڈ بینک کی سینئر ڈائریکٹر برائے غربت اینا روینگانے اس رپورٹ پر بات کرتے ہوئے کہا ”عالمی پیمانے پر غربت میں کمی کی کوششوں کے لئے بڑی حد تک چین کی کوششیں مثال ثابت ہوئی ہیں۔ اگر یہ کہا جائے کہ دنیا میں کوئی ملک دوسروں کو دکھا سکتا ہے کہ شدید غربت میں کمی کیسے کی جاسکتی ہے تو شاید یہ چین ہی ہے۔“

دوسری جانب ’شاننگ انڈیا“کے دعوے دار وزیراعظم مودی کے ملک میں غربت میں اضافہ جاری ہے اور ہر سال بھارت میں غریب لوگوں کی تعداد بڑتھتی جارہی ہے۔ایک رپورٹ کے مطابق بھارت میں 35کروڑ افراد خط غربت سے نیچے زندگی گزار رہے ہیں۔

مزید : بین الاقوامی