ایف پی پی سی سی آئی کا سی پیک میں معدنیات و کان کنی کے شعبہ میں کردارپر خصوصی اجلاس

ایف پی پی سی سی آئی کا سی پیک میں معدنیات و کان کنی کے شعبہ میں کردارپر خصوصی ...

  

لاہور(کامرس رپورٹر )فیڈریشن آف پاکستان چیمبرز آف کامرس اینڈ انڈسٹری کی قائمہ کمیٹی برائے معدنیات و کان کنی کے چےئرمین و سمال ٹریڈرز اینڈکاٹیج انڈسٹری کے سینئر وائس چےئرمین راجہ حسن اختر کی زیر صدارت ’’سی پیک میں معدنیات و کان کنی کے شعبہ کا کردار‘‘ کے حوالے سے خصوصی اجلاس ایف پی سی سی آئی ریجنل آفس میں منعقد ہوا، راجہ حسن اختر نے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ معدنیات و کان کنی کی دیگر ممالک کو برآمد کے ذریعے آمدنی میں اضافے کیلئے حکومت کوویلیو ایڈیشن یونٹس کی تنصیب کو یقینی بنا نا چاہئے، پرائس ریگولیشن اور سرحد پار تجارت کو دستاویزی معیشت میں شامل کرنے کیلئے حکومت کو اقدامات کرنیکی ضرورت ہے، انہوں نے وفاقی اورپنجاب حکومت سے اپیل کی کہ اکنامک کاریڈور کی افادیت کو دگناکرنے کیلئے ہر 3 سو کلو میٹر کے بعدایک کاٹیج انڈسٹری پارک کو یقینی بنایا جا نا چاہئے تاکہ چھوٹے چھوٹے علاقے کی علاقائی صنعت وحرفت کو ترقی دی جاسکے،انہوں نے کہاکہ ریلوے کان کنی کے سکیٹر کوپروموٹ کرنے میں اہم کردار ادا کر سکتا ہے۔

،پنجاب حکومت کو محکمہ ریلوے کے ساتھ اس سلسلے میں مختلف معاہدے کر نے چاہئیں،انہوں نے مزید کہاکہ چین پبلک پرائیویٹ پارٹنر شپ کے تحت قیمتی معدنی وسائل خاص طور پر کوئلے سے توانائی کی پیدوار نیز لوہے اور تانبے کے ذخائر کی دریافت کے منصوبوں میں حکومت پنجاب کو شاندار تعاون فراہم کر رہا ہے،اجلاس میں مد یحہ وقاص ،حسنا ت کمبوہ ،محمد یاسین،نبیل احمد،شعیب ہاشمی،ساجد خان،سلمان انس،طاہر نذیر،خرم اخلاق اور دیگر نے بھی اپنی اپنی تجاویز پیش کیں۔

مزید :

کامرس -