لاہور ہائی کورٹ نے چیئر مین پیمرا کی تعیناتی کے حوالے سے ریکارڈ طلب کر لیا

لاہور ہائی کورٹ نے چیئر مین پیمرا کی تعیناتی کے حوالے سے ریکارڈ طلب کر لیا
لاہور ہائی کورٹ نے چیئر مین پیمرا کی تعیناتی کے حوالے سے ریکارڈ طلب کر لیا

  

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک )لاہور ہائی کورٹ نے چیئر مین پیمرا ابصار عالم کی تعیناتی کے حوالے سے ریکارڈ طلب کر لیا ۔میڈ یا رپورٹس کے مطابق لاہور ہائی کورٹ میں چیئر مین پیمرا کی تعیناتی کے خلاف درخواست پر سماعت ہوئی ۔

”ہم جب بھی ان کے خلاف کارروائی کرنے لگتے ہیں آپ۔۔۔“ بڑے کمرے میں شہبازشریف نے ڈی جی آئی ایس آئی کو ایسی بات کہہ دی کہ سناٹا چھاگیا، کیا کہا؟جان کر آپ کا منہ بھی کھلے کا کھلا رہ جائے گا

درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ چیئر مین پیمرا کی تقرری میرٹ پر نہیںہوئی ،ابصار عالم چیئر مین پیمرا کی اہلیت پر پورے نہیں اترتے ۔درخواست میں کہا گیا کہ ابصار عالم حکومت کے ساتھ قریبی تعلقات کی وجہ سے پیمرا کے چیئر مین تعینات ہوئے ،ان کی تعیناتی سپریم کورٹ کے فیصلے کی خلاف ورزی ہے لہذا اسے کالعدم قرار دیا جائے ۔سماعت کے دوران عدالت نے چیئر مین پیمرا کی تعیناتی کے حوالے سے ریکارڈ طلب کر لیا ،عدالت کا کہنا تھا کہ چیئر مین پیمرا کی تعیناتی کے وقت دئیے گئے اشتہارات،درخواستوں اور شارٹ لسٹنگ کی فہرست فراہم کی جائے ۔

مزید :

قومی -