پاکستان نے بھارت کے خلاف دو رخی جارحانہ پالیسی اختیار کرنے کا فیصلہ کر لیا

پاکستان نے بھارت کے خلاف دو رخی جارحانہ پالیسی اختیار کرنے کا فیصلہ کر لیا
پاکستان نے بھارت کے خلاف دو رخی جارحانہ پالیسی اختیار کرنے کا فیصلہ کر لیا

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک )پاکستان نے بھارتی جارحیت سے متعلق دو رخی جارحانہ پالیسی اختیار کرنے کا فیصلہ کر لیا ۔

سارک کانفرنس کا بائیکاٹ کر کے بھارت نے اچھا نہیں کیا :سیکریٹری خارجہ

نجی نیوز چینل جیو نیوز کے مطابق دو روز قبل وزیراعظم کی زیر صدارت ہونے والے قومی سلامتی کے اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ پاکستان کے خلاف بھارت کی جانب سے سیاسی بیان بازی کا سخت جارحانہ بیانات سے جواب دیا جائے گا جبکہ سرحدی خلاف ورزیوں پر بھی جارحانہ انداز میں جواب دیا جائے گا ۔اجلاس میں سیاسی و عسکری قیادت موجود تھی جنہیں بھارتی جارحیت کے ثبوت بھی دئیے گئے تھے ،اس موقع پر سیاسی اور عسکری قیادت نے اتفاق کیا کہ اب ٹریک ٹو ڈپلو میسی پر توجہ مرکوز کی جائے گی۔اس موقع پر وزیر اعظم کاکہنا تھا کہ بھارت سے بات اسی صورت میں کی جائے گی جب وہ سنجیدہ عملی اقدامات دکھائے گا ۔

مزید :

قومی -اہم خبریں -