عمران خان کو پی پی اور آصف زرداری کے خلاف نہیں آنا چاہیے تھا،خبر نہیں کہ انہیں کون مشورے دے رہا ہے: اعتزاز احسن

عمران خان کو پی پی اور آصف زرداری کے خلاف نہیں آنا چاہیے تھا،خبر نہیں کہ ...
عمران خان کو پی پی اور آصف زرداری کے خلاف نہیں آنا چاہیے تھا،خبر نہیں کہ انہیں کون مشورے دے رہا ہے: اعتزاز احسن

  


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنماءاعتزاز احسن نے کہا ہے کہ آج عمران خان کے بیان کو سن کر بہت افسوس ہواہے،تحریک انصاف نے مشترکہ اجلاس کا بائیکاٹ کا کیا،خبر نہیں کہ انہیں کون مشورے دے رہا ہے۔عمران خان کو پاکستان پیپلز پارٹی اور آصف علی زرداری کے خلاف نہیں آنا چاہیے تھا۔

جیو نیوز کے مطابق میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا ہے کہ عمران خان کے بیان سے سخت مایوسی ہوئی،پیپلز پارٹی کس کی قیادت میں چلے یہ ہمارا اندرونی معاملہ ہے۔عمران نے الزام لگایا کہ ہمارے حکومت سے رابطے ہیں جبکہ پیپلز پارٹی نے حکومت کوہمیشہ ہی کڑے ہاتھوں لیا ہے۔نواز شریف کے احتساب پر پیپلز پارٹی اور پی ٹی آئی میں اتفاق تھا،ہم سمجھتے تھے کہ ہم پانامہ لیکس کو لے کر آگے چلیں گے۔ عمران خان کو پاکستان پیپلز پارٹی اور آصف علی زرداری کے خلاف نہیں آنا چاہیے تھا،اس سارے عمل کا فائدہ اب نواز شریف کو ہوگا۔نوا ز شریف کے بچوں نے پانامہ پر بار بار متضاد بیانا ت دئیے ہیں لیکن نواز شریف پانامہ میں نام آنے کے بعد نہیں بچ سکتے۔

انہوں نے کہا کہ مشترکہ اجلاس کا بائیکاٹ نہ کرکے پیپلز پارٹی نے درست فیصلہ کیا،پارلیمنٹ کا فورم صرف وزیر اعظم کا نہیں، ہم سب کا ہے۔مشترکہ اپوزیشن نے آٹھ نشستوں میں ٹی او آرز بنائے ہیں۔

مزید : اسلام آباد