ڈکیتی کی واردات میں ایک شخص جاں بحق ،سالوں کے تشدد سے زخمی دم توڑ گیا

ڈکیتی کی واردات میں ایک شخص جاں بحق ،سالوں کے تشدد سے زخمی دم توڑ گیا

ملتان (وقائع نگار) تھانہ ممتاز اباد کے علاقے میں ڈکیتی کی واردات کے دوران نامعلوم افراد کی فائرنگ سے ایک شخص جاں بحق ہوگیا۔ جبکہ پولیس نے ڈکیتی کا معاملہ مشکوک جان کر عورت سے (بقیہ نمبر42صفحہ12پر )

پوچھ گوچھ شروع کر دی۔پولیس ذرائع کے مطابق تھانہ ممتاز آباد کے علاقے میں گزشتہ شب میاں بیوی موٹر سائیکل پر سوار ہوکر جارہے تھے۔اچانک نامعلوم سامنے اگئے۔جن کی فائرنگ سے موٹر سائیکل سوار جاں بحق ہو گیا۔اطلاع پاکر مقامی پولیس موقع پر اگئی۔جنہوں نے جائے وقوعہ کا جائزہ لیا۔حالات مشکوک جان کر عورت سے تفتیش شروع کر دی۔پولیس کا کہنا ہے کہ ڈکیتی کی واردات معلوم نہیں ہوتی۔تاہم انکوائری کی جارہی ہے۔بہت جلد اصل حقائق سامنے اجائیں گے۔لاش پوسٹ مارٹم کے بعد ورثا کے حوالے کر دی گئی ہے تھانہ سیتل ماڑی کے علاقے میں تیسری شادی کی رنجش پر بیوی اور سالوں کے تشدد سے زخمی ہونے والہ شخص دم توڑ گیا۔واضح رہے چند روز قبل تھانہ سیتل ماڑی کے علاقے میں اصفہ نامی خاتون نے اپنے بھائیوں رفاقت اور لیاقت کیساتھ مل اپنے 45 سالہ شوہر ریاض کو تیسری شادی کرنے کی رنجش پر تشدد کا نشانہ بنایا۔جسکو تشویش ناک حالت میں نشتر ہسپتال منتقل کر دیا گیا۔جو گزشتہ روز زخموں کو تاب نا لاتے ہوئے دم توڑ گیا۔پولیس نے پوسٹمارٹ کے بعد لاش ورثا کے حوالے کردی۔جبکہ پولیس نے قتل کرنے کیالزام کے تحت ملزم رفاقت اور لیاقت کو گرفتار کرکے مقدمہ درج کرلیا ہے۔اور مفرر ملزمہ اصفہ کہ گرفتاری کیلئے چھاپے مار رہی ہے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر