پاکستان میں کینسر سے سالانہ ڈیڑھ لاکھ اموات ہوتی ہیں،طبی ماہرین

پاکستان میں کینسر سے سالانہ ڈیڑھ لاکھ اموات ہوتی ہیں،طبی ماہرین

لاہور(این این آئی) چھاتی کے سرطان کے عالمی دن کے حوالے سے پنجاب پبلک(بقیہ نمبر19صفحہ12پر )

ہیلتھ ایجنسی (پی پی ایچ اے) کے زیراہتمام ماہرین طب کے مباحثے کے شرکا نے اس بات پر تشویش کا اظہار کیا ہے کہ کینسر پوری دنیا میں اموات کی دوسری بڑی وجہ ہے اور سال 2018 میں اب تک 90لاکھ 60ہزار اس بیماری کی وجہ سے دنیا چھوڑ گئے ہیں۔ ماہرین نے بتایا کہ صرف پھیپھڑوں اور چھاتی کے سرطان سے سالانہ 20لاکھ 20ہزار افراد موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں جبکہ پاکستان میں بھی ہرسال کینسر کے تقریباً ڈیڑھ لاکھ افراد سرطان کے موذی مرض کا نشانہ بن جاتے ہیں لہٰذا اس ضمن میں عوام میں آگاہی وقت کی ضرورت ہے کیونکہ بروقت تشخیص سے ہی کینسر سے بچنا ممکن ہوتا ہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر