سپریم کورٹ نے ریلوے کی زمین کی فروخت کرنے پر فوری پابندی عائد کر دی

سپریم کورٹ نے ریلوے کی زمین کی فروخت کرنے پر فوری پابندی عائد کر دی

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)سپریم کورٹ نے ریلوے کی زمین کی فروخت کرنے پر فوری پابندی عائد کر دی ہے اور پابندی کے باوجود ادارے کی زمین فروخت کرنے پر وزارت ریلوے سے جواب طلب کرلیاہے ۔چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے کیس کی سماعت کی تو درخواست گزار کی خاتون وکیل نے بتایا کہ ریلوے کی زمین فروخت اور ٹرانسفر پر پابندی عائد کی گئی ہے۔اس پر چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ ریلوے کی زمین ریاست کی زمین ہے ریاست نے زمین ریلوے کو استعمال کے لیے دی ہوئی ہے اس لئے ریلوے زمین کی فروخت غیر قانونی ہے،ریلوے ریاست کی زمین فروخت نہیں کر سکتا۔ ریلوے کے وکیل کا کہنا تھا کہ ریلوے زمین فروخت کرنے پر پابندی 2009 میں لگی۔ چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ ریلوے کی زمین وفاقی حکومت فروخت کرسکتی ہے۔ریلوے ریاست کی زمین کیسے فروخت کر سکتی ہے؟ ریلوے کی زمین فروخت یا تحفہ میں کسی کو نہیں دی جاسکتی۔

سپریم کورٹ

مزید : علاقائی