مقدمہ خارج کرنے کی یقین دھانی پر عدالتی تالے کھول دیئے گئے

مقدمہ خارج کرنے کی یقین دھانی پر عدالتی تالے کھول دیئے گئے

لاہور( نامہ نگار)تھانہ اسلام پورہ پولیس کی جانب سے 10وکلاء کے خلاف دہشت گردی کی دفعات کے تحت ایف آئی آر درج کرنے پر گزشتہ روز وکلاء نے احتجاج کیا اور دن بھر پولیس کے خلاف نعرے بازی کرتے رہے۔ وکلاء نے اپنے 10وکلاء کے خلاف دہشت گردی کے مقدمہ کو خارج کرنے کا مطالبہ کرتے رہے سیشن کورٹ کے تمام داخلی اور خارجی دروازوں کو تالا لگا دیئے جبکہ عدالتی عملے اور سائلین کو بھی سیشن کورٹ میں داخل ہونے روک دیا، وکلاء کا مطالبہ تھا کہ 10وکلاء کے خلاف تھانہ اسلام پورہ میں درج کیا گیادہشت گردی کا مقدمہ خارج کیا جائے، احتجاج ختم کرنے کیلئے دن بھر ججوں اور وکلاء کے درمیان مذاکرات بھی ہوتے رہے جبکہ سائلین کی بڑی تعداد سیشن کورٹ کے باہر تالے کھلنے کا انتظار کرتی رہی،سیشن جج لاہور عابد قریشی، سینئر سول جج شکیب عمران نے وکلاء سے مذاکرات کئے، ایس پی سٹی ڈویژن اور ڈی ایس پی اسلام پورہ بھی مذاکرات میں شریک ہوئے تاہم وکلاء کا موقف تھاکہ جب تک وکلاء کے خلاف دہشت گردی کا مقدمہ خارج نہیں کیا جاتا ان کااحتجاج جاری رہے گا،بعدازاں سیشن جج لاہور نے وکلاء کو مقدمہ خارج کرنے کی یقین دھانی کرائی جس پر تالے کھول دیئے گئے۔

مزید : علاقائی