شہباز کی گرفتاری احتساب کی طرف اہم قدم : فواد چودھری، سب کٹہرے میں آنے کیلئے تیار ہو جائیں : فیاض چوہان

شہباز کی گرفتاری احتساب کی طرف اہم قدم : فواد چودھری، سب کٹہرے میں آنے کیلئے ...

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک،آئی این پی) وفاقی وزیراطلاعات فواد چوہدری نے شہبازشریف کی گرفتاری کے بعد مزید بڑی گرفتاریوں کا عندیہ دے دیا۔شہبازشریف کی گرفتاری پر رد عمل دیتے ہوئے اپنے بیان میں وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے کہاکہ شہبازشریف کی گرفتاری خوش آئنداور نیب کا ایک بڑا قدم ہے، یہ احتساب کی طرف یہ ایک اہم قدم ہے، ہم چاہتے ہیں اس معاملے کو آگے بڑھنا چاہیے، یہ تو پہلی گرفتاری ہوئی ہے، ابھی مزید بڑی گرفتاریاں ہونے والی ہیں۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے ٹویٹ میں وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات فواد چوہدری نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان شہباز شریف کی گرفتاری کے معاملے پر مداخلت نہیں کریں گے ، اپوزیشن چاہتی ہے کہ وزیراعظم تحقیقات پر اثرانداز ہوں ۔انہوں نے کہا کہ احتساب کا عمل مزید آگے بڑھے گا، کرپشن کیخلاف حکومت کی زیروٹالرنس پالیسی ہے۔اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کے دوران فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ یہ وہ مقدمات ہیں جو پچھلے دور میں نیب نے قائم کیے تھے جو بعد میں چلتے رہے، نیب نے تمام کارروائی کے بعد اب تحقیقات کا آغاز کیا ہے، ابتدائی تحقیقات میں نیب نے دیکھ لیا ہے کہ مقدمات میں وزن ہے، آشیانہ ہاؤسنگ سکیم میں 56 ارب روپے کی کرپشن کے الزامات ہیں اسی میں شہبازشریف کو گرفتار کیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومت اس تمام معاملے میں غیر جانبدار ہے، نیب کو جو تعاون درکار ہوگا وہ دیں گے، نیب کی ہر طرح کی مدد کرنے کو تیار ہیں۔وزیر اطلاعات کا کہنا تھاکہ نیب ایک آزاد ادارہ ہے یہ حکومت کے کنٹرول میں نہیں، نیب کی انتظامی مدد کرسکتے ہیں کریں گے، تحریک انصاف کے سینیٹر فیصل جاوید نے کہا ہے کہ شہباز شریف کی گرفتاری کو اسکرپٹ کہنے والے اپنی کرپشن کو دیکھیں ، احتساب کا عمل جاری رہے گا ، اس کے بغیر کوئی قوم ترقی نہیں کر سکتی ۔ جمعہ کو سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کی گرفتاری پر ردعمل دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ماضی میں چھوٹے چور پکڑے جاتے تھے ،احتساب کے بغیر پاکستان آگے نہیں جا سکتا۔پی ٹی آئی رہنما نعیم الحق نے کہا ہے کہ تحریک انصاف کسی سیاسی انتقام پر یقین نہیں رکھتی ، وزیراعظم عمران خان کو بھی سی ڈی اے سے نوٹس مل چکا ہے،قانون میں کوئی چھوٹا یا بڑا نہیں ہے ۔فیصل واوڈا نے کہا ہے کہ یہ سوال ہی پیدا نہیں ہوتا کہ عمران خان کوئی ڈیل کریں گے ، سیاسی جماعتیں ڈیل کے نام پر اداروں کو بدنام کرتی ہیں، نیب کارکردگی بہتر کرے تو تمام کرپٹ افراد پکڑے جائیں گے۔سیاسی مقدمات ہوتے تو نوازشریف اور مریم نواز باہر نہ آتے ، پولیس سمیت تمام اداروں میں ان کے لوگ بیٹھے ہیں ۔

تحریک انصاف

لاہور( نمائندہ خصوصی )نام نہاد خاد م اعلی نے صاف پانی پراجیکٹ کے نام پر غریب عوام کے ٹیکسوں کے300ارب روپے اپنے رشتہ داروں اور دوستوں میں بانٹ دیئے۔ شہباز حکومت کا 2014میں یہ شروع کیا گیا یہ منصوبہ چار سالوں میں صاف پانی کی ایک بوند عوام کو نہ پہنچا سکا۔احسن اقبال کے بھائی مجتبیٰ جمال ، زعیم قادری کے بھائی عاصم قادری ،منیر چودھری اورراجہ قمرالاسلام نے بہتی گنگا میں خوب ہاتھ دھوئے اور خاد م اعلی کو دعائیں دیں۔ یہ بات صوبائی وزیر اطلاعات فیاض الحسن چوہان نے ڈی جی پی آر آفس میں ایک پریس کانفرنس کے دوران بتائی ۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ پنجاب صاف پانی کمپنی 2014ء میں بنائی گئی تھی جس کا مقصد یہ تھا کہ دیہی علاقوں میں پینے کاصاف پانی فراہم کیاجائے اوریہ منصوبہ 300 ارب روپے سے شروع ہو کر اپریل 2018ء میں مکمل ہونا تھا۔ چار سال گزرنے کے باوجود اربوں روپے کی لوٹ مار کرنے کے باوجود ایک بوند پانی بھی کسی دیہی علاقے کے اندر اس پراجیکٹ کے ذریعے عوام تک نہیں پہنچی ۔صوبائی وزیر نے کہا کہ شہباز شریف نے پیپرارولز کی خلاف ورزی کرتے ہوئے پانی کی صفائی کے سب سے مہنگے سسٹم کی منظوری دی خادم اعلی نے کنسلٹنٹ ہائر کرنے کے لئے اپنے من پسند لوگوں کو بیرونی ممالک کے انتہائی مہنگے دوروں پر بھیج کر خزانے کو کروڑوں روپے کا نقصان پہنچایا۔صوبائی وزیر نے بتایا کہ 2016میں وسیم اجمل نامی پراجیکٹ کور کمیٹی کے ممبر کے خلاف انکوائری کمیٹی بنی جس کا سربراہ ایک کرپٹ ترین ڈی جی ایل ڈی اے احد چیمہ کو بنایا گیا اس بدعنوان شخص نے بھی اپنی رپورٹ میں تسلیم کیا کہ پراجیکٹ میں 7ارب روپے کی کرپشن ہوئی ہے لیکن بعد ازاں یہ رپورٹ کھڈے لائن چلی گئی۔ صاف پانی منصوبے کیلئے ٹھیکیدار چنتے وقت بھی اسی قسم کے قوانین یا پیپرا قواعد کا کوئی خیال نہیں رکھا جاتا تھا ۔پروفیسر احسن اقبال کے بھائی مجتبیٰ جمال کو پہلا چیئرمین بورڈ آف ڈائریکٹرز لگایا گیا ، ان کے علاوہ وزیراعلی نے اپنے خاص فرنٹ مین منیر چوہدری اور راولپنڈی کے ایم پی اے راجہ قمرالاسلام کو اس پراجیکٹ میں تعینات کرکے لوٹ مار پر لگا دیا۔فیاض الحسن چوہان نے کہاکہ آشیانہ کمپنی کے علاوہ صاف پانی پراجیکٹ اور سانحہ ماڈل ٹاؤن جیسے کئی واقعات شہباز شریف کی گرفتاری اور احتساب کے منتظر ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ صاف پانی پراجیکٹ میں ممبر کور کمیٹی وسیم اجمل اور ان کے ساتھ شریک دیگر ملزمان وعدہ معاف گواہ بن سکتے ہیں ۔ یہ وعدہ معاف گواہ احسن اقبال کا بھائی مرتضی جمال ، زعیم قادری کا بھائی عاصم قادری ، سابق وزیراعلی کا فرنٹ مین منیر چوہدری اور ایک اور ملزم جنید بھی ہوسکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ سابق ڈی سی او نارووال نجف اقبال اور ان کی بیگم شبنم نجف کا بھی لوٹ کھسوٹ کے اس سنگین واقعہ میں کردار ہے یہ سب لوگ اب انصاف کے کٹہرے میں آنے کیلئے تیار ہو جائیں۔پنجاب کے وزیراطلاعات فیاض الحسن چوہان کا اس حوالے سے کہنا تھا کہ خادم اعلیٰ کی خدمت کے ثمرات ملنا شروع ہوگئے ہیں، سابق حکومت کے دیگر کرپٹ عناصر بھی جلدجیل میں ہوں گے۔انہوں نے کہاکہ عوام کو خوشخبریاں ملنے کا موسم شروع ہو گیا ہے۔

مزید : صفحہ اول