شہباز شریف کی گرفتاری بدترین انتقامی کارروائی ہے،شاہ محمد شاہ

شہباز شریف کی گرفتاری بدترین انتقامی کارروائی ہے،شاہ محمد شاہ

کراچی(اسٹاف رپورٹر) پاکستان مسلم لیگ (ن)سندھ کے صدر شاہ محمد اور سابق سیکرٹری اطلاعات خواجہ طارق نذیر قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر اور مسلم لیگ (ن)کے صدر میاں شہباز شریف کی نیب کے ہاتھوں گرفتار ی کو بدترین انتقامی کارروائی قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ تبدیلی کی باتیں کرنے والی حکومت عوام کوریلیف فراہم کرنے میں ناکام ہوگئی ہے اور اب لوگوں کو الجھانے کے لیے اس طرح کی کارروائیاں کی جارہی ہیں ۔مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور کارکنوں کو اس طرح کے ہتھکنڈے مشن سے پیچھے ہٹنے پر مجبور نہیں کرسکتے ہیں ۔نیب کی کارروائیاں صرف مسلم لیگ (ن) کے خلاف ہیں علیم خان سمیت دیگر لاڈلوں کے اوپر ہاتھ ڈالنے سے ان کے پر جلتے ہیں ۔جمعرات کو جاری بیان میں مسلم لیگی رہنماؤں نے کہا کہ میاں شہباز شریف کی گرفتاری سے تحریک انصاف کی جمہوریت پسندی کھل کر سامنے آگئی ہے ۔اپوزیشن لیڈر کو گرفتار کرکے تحریک انصاف نے اپنے عزائم ظاہر کردیئے ہیں ۔ملک کو ایک مرتبہ پھر محاذ آرائی کی سیاست کی طرف لے جایا جارہا ہے ۔شہباز شریف کو ان الزامات کے تحت گرفتار کیا گیا ہے جن سے ان کو دور دور تک کوئی تعلق نہیں ہے ۔انہوں نے کہا کہ تبدیلی سرکاری اپنے 100دنوں کے ایجنڈے کو پورا کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہوگئی ہے ۔تحریک انصاف کی حکومت کی جانب سے پیش کیا گیا بجٹ ملک میں مہنگائی کا نیا طوفان لائے گا اور اس کے لیے دو وقت کی روٹی کا حصول بھی مشکل بن جائے گا ۔ملک کے مستقبل بننے والے سی پیک منصوبے کو متنازع بنادیا گیا ہے اور اگر یہ مزید کچھ عرصے تک اقتدار میں رہے تو پاکستان کو ناقابل تلافی نقصان پہنچنے کا خدشہ ہے ۔مسلم لیگی رہنماؤں نے کہا کہ ضمنی انتخابات سے قبل شہباز شریف کو گرفتار کرکے ایک مرتبہ پھر لاڈلوں کے لیے راہ ہموار کی جارہی ہے ۔مسلم لیگ (ن) کو ضمنی انتخابات سے دور رکھنے کے تمام ہتھکنڈے ناکام ہوں گے ۔انہوں نے کہا کہ نیب صرف مسلم لیگ (ن) کے خلاف سرگرم عمل ہے ۔عوام سوال پوچھتے ہیں کہ علیم خان ،جہانگیرترین اور دیگر لاڈلوں کے خلاف نیب کب حرکت میں آئے گا ۔حکومت ایک طرف غریبوں کے جھونپڑے گرارہی ہے تو دوسری جانب سے بنی گالہ ریگولرائز کرنے کے لیے وقت پر وقت دیا جارہا ہے

مزید : کراچی صفحہ اول