انٹرنیشنل ستارے لاہور مےںبھی جگمگا اٹھے

 انٹرنیشنل ستارے لاہور مےںبھی جگمگا اٹھے

  

سری لنکا کرکٹ ٹیم کا دورہ پاکستان تازہ ہواکا جھونکا ہے،جس سے پاکستان میں بین الاقوامی کھیلوں کے دروازے کھل رہے ہیں، سری لنکا کرکٹ ٹیم نے پاکستان کا دورہ کرکے انٹرنیشنل کرکٹ کی بحالی میں ہماری مدد کی ہے ۔پاکستان کے عوام کرکٹ سے بے حد محبت کرتے ہیں، پاکستان میں ایک طویل عرصہ کے بعد کرکٹ کی بحالی یقینی طور پر ایک بہت خوش آئند بات ہے اور اس حوالے سے پاکستان کرکٹ بورڈ کی کاوشوں کی تعریف کی جائے کم ہے جس طرح سے انہوں نے لنکن کرکٹ بورڈ کو قائل کیا۔پاکستان کی ٹیم نے سری لنکا کے خلاف کراچی میں کھیلی جانے والی ون ڈے سیریز جیت لی اور پندرہ ماہ بعد پاکستان کی ٹیم نے کوئی سیریز اپنے نام کی ، پاکستانی کھلاڑیوں نے جس عمدہ کھیل کامظاہرہ کیا امید ہے کہ یہ سلسلہ اسی طرح مستقبل میں بھی جاری رہے گا۔خاص طور پر پاکستانی بیٹسمینوں نے اپنی اہلیت کو ثابت کیا ،جبکہ قومی ٹیم کے کپتان سرفراز احمد 50ون ڈے انٹرنیشنل میچز میں قیادت کرنے والے دنیا کے دوسرے وکٹ کیپر بن گئے۔کپتان سرفراز احمد نے 50ون ڈے انٹرنیشنل میچز میں قیادت کا یہ اعزاز گزشتہ روز کراچی میں سری لنکا سے تیسرے میچ کے دوران حاصل کیا۔سابق بھارتی کپتان مہندرا سنگھ دھونی اس فہرست میں سب سے اوپر ہیں، انھوں نے 200میچز میں کپتانی کی، ان میں 110فتوحات نصیب ہوئیں، 74میں شکست کا سامنا کرنا پڑا، 5 میچز ٹائی ہوئے اور 11 غیر فیصلہ کن رہے جب کہ سرفراز کی زیر قیادت پاکستان نے 28میچز جیتے،20میں ناکامی ہوئی اور2میچز بے نتیجہ رہے۔جبکہ سری لنکا کے خلاف ون ڈے سیریز دو صفر سے جیتنے کے باوجود پاکستانی کرکٹ ٹیم آئی سی سی رینکنگ میں چھٹے نمبر پر ہے۔سری لنکا کا آٹھواںنمبر ہے۔عالمی چیمپین انگلینڈ بدستور ٹاپ پر ہے۔سیریز کی کارکردگی کے بعدپاکستان کے فاسٹ بولرمحمد عامر ٹاپ دس بولروں کی فہرست میں آگئے ہیں۔محمد عامر نے ون ڈے بولرز میں کیرئیر کی بہترین ساتویں پوزیشن حاصل کرلی ہے۔مین آف دی سیریز بابر اعطم کی تیسری پوزیشن برقرارہے۔ون ڈے بیٹسمینوں میں فخر زمان 16ویں پوزیشن پر آگئے۔لیفٹ آرم فاسٹ بولرعثمان شنواری کی ون ڈے رینکنگ میں اٹھائیس درجہ بہتری، 43 ویں پوزیشن پر آگئے ہیں۔جبکہ دوسرے ون ڈے میچ میں بابر اعظم نے کیریئر کی 11ویں سنچری 71ویں اننگز میں بنا کر بھارتی کپتان ویرات کوہلی کو پیچھے چھوڑ دیا، کوہلی نے 82ویں اننگز میں 11 سنچریاں بنائی تھیں۔جنوبی افریقا کے ہاشم آملہ نے 64 اور کوئنٹن ڈی کوک نے 65 اننگز میں 11 سنچریاں مکمل کی تھیں۔بابر اعظم نے سری لنکا کے خلاف 105 گیندوں پر 115 رنز کی اننگز کھیلی، ان کی اننگز میں 8 چوکے اور 4 بلند و بالا چھکے شامل تھے۔بابر اعظم نے 2019 میں ون ڈے میں ایک ہزار رنز بھی مکمل کرلیے، وہ کلینڈر ایئر میں تیز ترین ایک ہزار رنز بنانے والے پاکستانی بلے باز بھی بن گئے ہیں۔بابر اعظم پاکستان کی جانب سے ون ڈے میں سب سے زیادہ سنچریاں بنانے والے کھلاڑیوں کی فہرست میں بھی تیسرے نمبر پر آگئے ہیں، سعید انور 20 سنچریوں کے ساتھ پہلے جبکہ محمد یوسف 15 سنچریوں کے دوسرے نمبر پر موجود ہیں۔جبکہ پاکستان کرکٹ ٹیم کے اوپنگ بیٹسمین عابد علی کا کہنا ہے کہ اوپنرز کے درمیان جگہ پکی کرنے کا مقابلہ ٹیم کیلئے مثبت ہے، یہ مقابلہ ہر کسی کو بہتر سے بہتر پرفارم کرنے کا جذبہ دیتا ہے۔عابد علی نے کہا کہ وہ کبھی اس بات سے مایوس نہیں ہوتے کہ اچھی کارکردگی کے باوجود ٹیم سے ڈراپ ہوگئے، کیوں کہ جو ہوتا ہے بہتری کیلئے ہوتا ہے۔عابد علی نے کہا کہ سری لنکا کیخلاف آخری میچ میں یادگار پرفارمنس پر وہ خوش ہیں، وہ یہ پرفارمنس اپنی بیٹی کے نام کرنا چاہیں گے، انہیں اس بات کی بھی خوشی ہے کہ پاکستان میں کرکٹ ہورہی ہے اور اس میں ان کی پرفارمنس بھی ہوئی ہے۔ایک سوال پر عابد علی نے کہا کہ وہ ماضی کے تمام ٹاپ بیٹسمینوں کی وڈیوز دیکھ کر اپنا کھیل بہتر کرنے کی کوشش کرتے ہیں، حالیہ دنوں میں مصباح الحق اور یونس خان کو زیادہ فالو کیا ہے۔عابد علی نے کہا کہ یہ تاثر درست نہیں کہ وہ سست بیٹنگ کرتے ہیں، جو گیند آتی ہے اسے وہ میرٹ کے مطابق کھیلنے کی کوشش کرتے ہیں۔سری لنکا کیخلاف میچ میں پرفارمنس پر انہوں نے کہا کہ ٹیم کا اسٹارٹ اچھا تھا لیکن سری لنکا نے بھی اچھا کھیلا، وہ بھی انٹرنیشنل ٹیم ہے، کوئی کم تر ٹیم نہیں تھی، وہ بھی کرکٹ کھیلنے آئے تھے۔ان کا کہنا تھا کہ کوئی کھلاڑی جان بوجھ کر سنچری مس نہیں کرتا، جو صورتحال ہوتی ہے اس کے مطابق ہی کھیلا جاتا ہے۔ایک سوال پر عابد علی نے امید ظاہر کی کہ انہیں آئندہ بھی جب بھی اور جہاں بھی موقع ملا، وہ اپنا سو فیصد دینے کی پوری کوشش کریں گے۔عابد علی نے کہا کہ وکٹ کیپنگ وہ شوقیہ طور پر کرتے ہیں اور ان کا فوکس اس وقت صرف بیٹنگ پر ہے۔جبکہ احمد شہزاد ایک سال بعد قومی ٹی ٹوئنٹی کرکٹ ٹیم کا حصہ بنے ہیں۔ پاکستان کی جانب سے اس فارمیٹ میںمیں واحد سنچری اسکور کرنے والے احمد شہزاد نے آخری بار 13 جون 2018 کو ا سکاٹ لینڈ کے خلاف قومی ٹیم کی نمائندگی کی تھی۔ اوپنر نے 57 ٹی ٹوئنٹی میچوں میں 1454 رنز بنارکھے ہیں۔ 26.43 کی اوسط سے اسکور کرنے والے احمد شہزاد کے کیریئر میں 1 سنچری اور 7 نصف سنچریاں شامل ہیں۔ احمد شہزاد نے کہاکہ ٹیم میں واپسی کے لیے اعصابی مضبوطی درکار ہوتی ہے۔ ہر دن ایک نیا دن ہوتا ہے، ٹیم سے دور رہ کر اپنی خامیوں پر قابو پانے کا موقع ملا۔ ہوم کراوڈ کے سامنے کھیلنا پہلی مرتبہ گرین شرٹ زیب تن کرنے کے مترادف ہے۔ سری لنکا کے خلاف ایک روزہ سیریز میں قومی کرکٹ ٹیم نے بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے۔ امید ہے ٹی ٹوئنٹی سیریز میں بھی کھلاڑی شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کریں گے۔ دوسری جانب مڈل آرڈر بیٹسمین عمر اکمل کی بھی 3 سال بعد قومی ٹی ٹوئنٹی کرکٹ ٹیم میں واپسی ہوئی ہے۔ آخری بار 27 ستمبر 2016 کو ویسٹ انڈیز کے خلاف قومی ٹی ٹوئنٹی کرکٹ ٹیم کی نمائندگی کی تھی۔ مڈل آرڈر بیٹسمین نے 82 ٹی ٹونٹی میچوں میں 1690 رنز بنارکھے ہیں۔ عمر اکمل نے کہا کہ قومی ٹیم میں کم بیک کرنے کے لیے انہوں نے بہت محنت کی ہے۔ ان کے مرحوم سسر عبدالقادر کی خواہش تھی کہ وہ جلد قومی کرکٹ ٹیم میں کم بیک کریں۔ انہوں نے کہا کہ سری لنکا کے خلاف سیریز میں وہ بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرکے اسے لیجنڈری کرکٹر عبدالقادر اور اپنی والدہ کے نام کریں گے،میں نے 3 سال میں اپنی فٹنس اور اسکلز میں بہتری پر خصوصی توجہ دی ہے۔ عمر اکمل نے مزید کہاکہ وہ اپنے کیریئر میں دوسری ہوم سیریز کھیل رہے ہیں۔جبکہ ویسٹ انڈیز کے سابق کرکٹر مائیکل ہولڈنگ نے کہا کہ پاکستان آکر کوئی سیکورٹی رسک محسوس نہیں ہوا یہاں اپنا سیکیورٹی گارڈ میں خود ہوں۔ ویسٹ انڈین کرکٹر نے کہا کہ ان بچوں کے درمیان آکر خوشی محسوس کررہا ہوں، بچے ہی ہیں جو آگے صحت مند نسل کو آگے بڑھائیں گے، ہمیں ان بچوں کا ساتھ دینا ہے، اپنائیت کے ساتھ ان بچوں کا علاج ہوگا تو ان کے دل سے مایوسی دور ہوگی لیکن ابھی پاکستان میں تھیلیسیمیا سے متعلق لوگوں کو آگاہی کی مزید ضرورت ہے۔کرکٹر نے وزیر اعظم عمران خان کے حوالے سے کہا کہ عمران جان اچھے کھلاڑی ہونے کے ساتھ اچھے سیاست دان بھی ثابت ہوئے ہیں کیوں کہ جس طریقے سے عمران خان نے کرکٹ ٹیم کو لیڈ کیا ایسے ہی ملک کو بھی لیڈ کر رہے ہیں۔مائیکل ہولڈنگ نے یہ بھی کہا کہ دس سال پہلے کے واقعے پر پاکستان کو تنہا نہیں کیا جا سکتا، پاکستانی قوم کرکٹ سے بہت محبت کرتی ہے، پاکستان میں کرکٹ کی واپسی خوش آئند ہے اور پاکستان میں سیکیورٹی کے کوئی مسائل نہیں ہیں، پاکستان آکر کوئی سیکیورٹی رسک محسوس نہیں ہوا کیوں کہ اپنا سیکیورٹی گارڈ میں خود ہوں، اپنے آپ پر بھروسا کریں یہ کھیل ہی ملک کو آگے لے کر جائے گا۔

   ہاکی،پاکستان ڈویلپمنٹ اسکواڈ نے سیریز جیت لی 

پاکستان ڈویلپمنٹ اسکواڈ نے اومان ہاکی ٹیم کو تیسرے میچ میں لاہور کے جوہر ٹاﺅن ہاکی اسٹیڈیم میں چار گول سےشکست دیکر سیریر جیت لی، مہمان ٹیم جونیئر ورلڈ کپ کوالیفائنگ راونڈ کی تیاری کے سلسلے میں پاکستان کا دورہ کررہی ہے 

فیفا نے بیچ سوکر ورلڈ کپ کے شیڈول کا اعلان کر دیا

 فیفا نے بیچ سوکر ورلڈ کپ 2019 کے شیڈول کا اعلان کر دیا ہے، میگا ایونٹ 21 نومبر سے پیراگوئے میں شروع ہوگا۔فیفا کے مطابق ٹورنامنٹ میں دنیا بھر سے 16 ٹیمیں شرکت کریں گی جنہیں چار گروپوں میں تقسیم کیا گیا ہے، گروپ اے میں پیراگوائے، جاپان، سوئٹزرلینڈ اور امریکا گروپ بی میں یوروگوائے، میکسیکو، اٹلی اور ہیٹی گروپ سی میں بیلاروس، یو اے ای، سینیگال اور روس جبکہ گروپ ڈی میں برازیل، اومان، پرتگال اور نائیجیریا شامل ہے۔ ٹورنامنٹ کا افتتاحی میچ میزبان پیراگوائے اور جاپان کے درمیان کھیلا جائے گا، ہر ٹیم تین گروپ میچ کھیلے گی، ٹورنامنٹ کا فائنل یکم دسمبر کو کھیلا جائے گا۔ 

 ٹینس میچ میں نازیبا الفاظ کا استعمال، امپائر پر پابندی لگ گئی

انٹرنیشنل ٹینس فیڈریشن نے ایونٹ کے دوران ایک خاتون کیخلاف نازیبا الفاظ استعمال اور ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر امپائر پر پابندی لگا دی اور تحقیقات کا آغاز کر دیا۔امریکی خبر رساں ادارے کے مطابق یہ واقعہ چند روز قبل اٹلی میں اے ٹی پی کے مردوں کے ٹورنامنٹ کے دوسرے میچ کے دوران پیش آیا جبکہ میچ کے دوران ایک اور کھلاڑی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کے مرتکب بھی قرار پائے گئے۔ایک ویڈیو میں امپائر گیان لوکا موسکاریلا کو بال گرل کے خلاف نازیبا زبان اور ذومعنی الفاظ کا استعمال کرتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔ انہوں نے بال گرل سے کہا کہ تم بہت پر کشش ہو اور پھر پوچھا کہ کیا تم ذہنی و جسمانی طور پر ہاٹ ہو یا پھر دونوں ہو۔واقعہ چیلنجر ٹور میں پیڈرو سوزا اور اینریکو دلا ویلے کے میچ کے دوران پیش آیا جہاں ایک ٹوائلٹ بریک کے دوران کھلاڑی کی غیرموجودگی میں دوسرے کی حوصلہ افزائی کی اور اسے ہدایات بھی دیں۔اے ٹی پی کے مطابق ہمیں پیڈرو سوزا اور اینریکو دلا کے درمیان میچ میں پیش آنے والے واقعات کے بارے میں علم ہے، جیسے ہی ہمیں اس بارے میں علم ہوا تو ہم نے فوری طور پر موسکاریلا کو ٹورنامنٹ سے برطرف کردیا تھا۔موسکاریلا کو عبوری طور پر معطل کردیا گیا ہے اور تفتیش شروع کر دی گئی ہے۔ سوزا نے دوسرے رانڈ کے میچ میں 5-7، 6-4، 4-6سے شکست دے کر فتح حاصل کی تاہم میچ کے دوران امپائر موسکاریلا نے انہیں لقمہ دیتے ہوئے میچ پر توجہ دینے کی ہدایت دی تھی۔

 33ویں نیشنل گیمزکیلئے کبڈی ٹیم کے تربیتی کیمپ کا آغا زہوگیا 

 صوبائی دارالحکومت پشاور میں منعقدہ 33ویں نیشنل گیمزکیلئے صوبائی کبڈی ٹیم کے تربیتی کیمپ کا آغا زہوگیا،کوالیفایڈ کوچ اور صوبائی ایسوسی ایشن کے سیکرٹری سلطان سید علی شاہ کیمپ میں شریک کھلاڑیوں کو ٹریننگ دے رہے ہیں،پاکستان کبڈی فیڈریشن کے صدر رانامحمد سرور،صوبائی اولمپک ایسوسی ایشن کے سیکرٹری ذوالفقار بٹ ، صوبائی کبڈی ایسوسی ایشن کے چیئرمین پیر برکت علی شاہ اور سیکرٹری سلطان سید علی شاہ بھی موجودتھے،فیڈریشن کے صدر رانامحمد سرور کا کیمپ میں شریک کھلاڑیوں کیساتھ تعارف کرایاگیا،اس موقع پر رانامحمد سرور کو بتایاگیاکہ کبڈی کھلاڑیوں کا تربیتی کیمپ یکم اکتوبر سے سپورٹس آریناقیوم سٹیڈیم میں شروع ہوگیاہے جہاں پر جدیدطرزپر ٹریننگ دی جارہی ہے،کیمپ میں جونیئر کھلاڑیوں کیساتھ سینئر کھلاڑی بھی شامل ہیں ،بتایاگیاکہ کیمپ کے آخر میں ٹیم کیلئے حتمی کھلاڑیوں کا انتخاب انکی پرفارمنس کی بنیاد پر کی جائے گی۔اس موقع پر صوبائی کبڈی ایسوسی ایشن کے چیئرمین پیر برکت علی شاہ اور سیکرٹری جنرل سلطان سید علی شاہ نے بتایاکہ کھلاڑیوں کا مورال بلند ہے اور انشاءاللہ نیشنل گیمزمیں میڈلز جیتنے کی صلاحیت رکھتے ہیںان کھلاڑیوں کو روزانہ کی بنیاد پر ٹریننگ دی جارہی ہے ،جس سے انکے پرفارمنس مزید بہتر ہورہے ہیں،سلطان بری کا کہناتھاکہ صوبائی سپورٹس ڈائریکٹریٹ کے حکام اور صوبائی اولمپک ایسوسی ایشن کے صدر سید عاقل شاہ کی ہدایت پر کبڈی کھلاڑیوں کو مکمل سہولیات فراہم کی گئی ہے جس سے کھلاڑیوں کی بہتر اندازمیں حوصلہ آفزائی ہوئی ہے اور سپورٹس حکام سے مطمئن ہیں،انہوںنے کہاکہ ٹرائلز کے دوران کسی بھی کھلاڑی کی حق تلفی نہیں ہوئی ،ہماراکوئی رشتہ دار نہیں ،جس نے بہتر پرفارمنس دی ،انہیں کیمپ کا حصہ بنایااور جس کھلاڑی نے بھی کیمپ میں بہتر پرفارمنس کا مظاہرہ کیااور خودمنوایا انہیں ٹیم کا حصہ بنائیںگے۔

فٹبالر محمد صلاح سے متاثر ہو کر مداح نے اسلام قبول کر لیا

مصر اور لیورپول فٹ کلب سے تعلق رکھنے والے فٹ بالر محمد صلاح کی طرز زندگی دیکھ کر ان کے ایک غیر مسلم مداح بین بڑد نے اسلام قبول کر لیا۔ انہوں نے اسلام کی جانب سفر کو بیان کرتے ہوئے کہا کہ محمد صلاح نے مجھے بہت متاثر کیا، میں جس طرح زندگی گزار رہا تھا اس تسلسل کو قائم رکھ سکتا تھا تاہم میں نے ایمان کا راستہ اپنایا جس نے مجھے مسلمان کر دیا۔انہوں نے اس خواہش کا اظہار کیا کہ میں صرف محمد صلاح سے ملنا چاہتا ہوں ان کا ہاتھ ملا کر شکریہ ادا کرنا چاہتا ہوں۔بین برڈ نے کہا کہ میرے دوستوں کو ابھی تک یقین نہیں کہ میں نے اسلام قبول کر لیا ہے کیونکہ میری زندگی گزارنے اور رہن سہن میں زیادہ فرق نہیں آیا ہے، ہاں اب میں فٹ بال مقابلوں کے دنوں میں شراب خانوں اور جوے کے اڈے پر نہیں جاتا۔انہوں نے شرمندگی کا اظہار کرتے ہوئے کہ اسلام قبول کرنے سے پہلے میری اس دین کے حوالے سے سوچ زیادہ مثبت نہیں تھی، میں بھی اور لوگوں کی طرح اس مذہب کو دکیانوسی سمجھتا تھا، لیکن میرے ان تمام خیالات کو محمد صلاح نے غلط ثابت کر دیا۔ان کا کہنا تھا کہ صلاح اللہ کی جانب سے دیا گیا ایک تحفہ ہیں جو دنیا میں اسلاموفوبیا کے خلاف لڑ رہے ہیں۔

مزید :

ایڈیشن 1 -