2 نوجوانوں نے اپنی منہ بولی ماں کی بیٹی کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد ماں کی بھی آبرو ریزی کردی

2 نوجوانوں نے اپنی منہ بولی ماں کی بیٹی کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنانے کے ...
2 نوجوانوں نے اپنی منہ بولی ماں کی بیٹی کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد ماں کی بھی آبرو ریزی کردی

  

پٹنہ (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی ریاست بہار میں ماں اور بیٹی کے ساتھ اجتماعی زیادتی اور بلیک میلنگ کے معاملے کا انکشاف ہوا ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ریاست بہار کے ضلع موتیہاری میں ایک خاتون نے اپنے مکان کا ایک حصہ شکار گنج کے دھیرج کمار اور منوج کمار کو دے رکھا تھا۔ کرایہ داروں اور مکان مالکن کے تعلقات اتنے خوشگوار تھے کہ دونوں نوجوان اسے ماں کہہ کر بلانے لگے۔

جب اعتماد کی فضا بھرپور طریقے سے قائم ہوگئی تو نوجوانوں نے اپنی منہ بولی ماں سے ڈھاکہ میں کاروبار شروع کرنے کیلئے4 لاکھ روپے قرض لیا ۔ قرض لینے کے بعد دونوں نوجوانوں نے کاروبار شروع نہ کیا اور جی ایس ٹی میں تاخیر کا بہانہ کرکے بات کو ٹالتے رہے، جب رقم کی واپسی کا مطالبہ شدت اختیار کرگیا تو ایک دن دونوں نوجوانوں نے خاتون کی بیٹی کی آبرو ریزی کی اور اس کی ویڈیو بنالی۔

خاتون کچھ عرصہ تک تو بیٹی کی بدنامی کے ڈر سے خاموش رہی لیکن پھر اس نے دوبارہ رقم کی واپسی کا مطالبہ شروع کردیا جس کے بعد دونوں نوجوانوں نے اپنی منہ بولی ماں کو بھی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا اور اس واقعے کی بھی ویڈیو بنالی۔

ماں اور بیٹی کی اجتماعی آبرو ریزی کا واقعہ مئی میں پیش آیا جس کے بعد 5 مہینے تک بلیک میلنگ کا سلسلہ چلتا رہا ۔ 4 اکتوبر کو خاتون نے ہمت کرکے پولیس کو واقعے کی شکایت کردی جس پر ایف آئی آر درج کرکے ملزمان کے خلاف کارروائی شروع کردی گئی ہے۔

مزید :

جرم و انصاف -