کاشتکاروں کی خوشحالی اولین ترجیحات میں شامل ہے، صوبائی وزیر زراعت

کاشتکاروں کی خوشحالی اولین ترجیحات میں شامل ہے، صوبائی وزیر زراعت

  

لاہور(سٹی رپورٹر)موجودہ حکومت کی ترجیحات میں زرعی ترقی اور کاشتکاروں کی خوشحالی سرِ فہرست ہے۔کاشتکاروں کو معیاری بیج کی فراہمی اور اُن کی پیداواری لاگت میں کمی کیلئے پبلک و پرائیویٹ سیکٹر کو مل کر کام کرنا ہوگا اور نجی شعبہ کی جاری ریسرچ و ڈویلپمنٹ کے حوالے سے سرگرمیوں کی حوصلہ افزائی کی جائے گی ان خیالات کا اظہاروزیر زراعت پنجاب سید حسین جہانیاں گردیزی نے بائر ریسرچ سنٹر مانگا منڈی کے دورہ کے موقع پر کیا۔وزیر زراعت پنجاب نے مزید کہا کہ کپاس ہماری ایک اہم ترین فصل ہے۔ کپاس کی پیداوار میں اضافہ کیلئے جدید ٹیکنالوجی کا حصول وقت کی اہم ضرورت ہے۔ موجودہ حکومت کا نصب العین کاشتکاروں کی خوشحالی ہے اور کپاس کی پیداوار میں اضافہ کیلئے جدید ٹیکنالوجی کے حصول کیلئے ہر ممکن قدم اٹھایا جارہا ہے تاکہ ہماری کپاس کی پیداوار میں اضافہ ہو اور کپاس کی سابقہ حیثیت کو دوبارہ بحال کیا جائے گا۔ موجودہ حکومت کپاس کی سفید مکھی کے کنٹرول کے لئے 4ارب اور بیجوں کی فراہمی کے لئے 4 ارب روپے کی سبسڈی بھی فراہم کر رہی ہے۔

کپاس کی بحالی ایک بڑا چیلنج ہے جس کو پورا کرنے کیلئے تمام اسٹیک ہولڈرز کو مل کر کام کرنا ہو گا۔وزیر زراعت نے مزید کہا کہ جاری موسمیاتی تبدیلیوں کی وجہ سے کپاس کے بیج کی پرانی ٹیکنالوجی کے استعمال کے باعث پیداوار میں کمی کا سامنا ہے۔کپاس کی جدید بی ٹی کے حامل بیج کے استعمال سے فصل پر سفید مکھی،گلابی سنڈی و دیگر کیڑے مکوڑوں کا حملہ کم ہوگا اور یہ اقسام جڑی بوٹیوں کے خلاف بھی موثر ثابت ہوں گی جس کاشتکاروں کی پیداواری لاگت میں کمی کے ساتھ کپاس کی فی ایکڑ پیداوار میں اضافہ ہوگا۔وزیر زراعت پنجاب نے اس موقع پر بائر ریسرچ سنٹر پر فصلات پرہونے والی کی جدید ریسرچ کو سراہا۔

مزید :

کامرس -