سندھ اسمبلی:پی ٹی آئی نے گندم بحران پر قرارداد جمع کرادی

سندھ اسمبلی:پی ٹی آئی نے گندم بحران پر قرارداد جمع کرادی

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)پاکستان تحریک انصاف کے اراکین سندھ اسمبلی نے گندم کا مصنوعی بحران پیدا کرنے پر سندھ حکومت کے خلاف مذمتی قرارداد جمع کروادی۔قرارداد رکن سندھ اسمبلی خرم شیر زمان نے سیکرٹری سندھ اسمبلی کو جمع کرائی۔خرم شیر زمان کے ہمراہ اراکین سندھ اسمبلی جمال صدیقی، راجہ اظہر، عمران شاہ، عمر عماری بھی موجود تھے۔ قرارداد جمع کروانے کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے خرم شیر زمان کا کہنا تھا کہ ہم نے ایک مذمتی قراداد جمع کروائی ہے جس کا تعلق بلاول زرداری سے ہے۔بلاول زرداری نے گندم رلیزنہ کرنے کی قسم اٹھائی ہے۔لاکھوں ٹن گندم غائب کرنے پر نیب انکوائری کررہی ہے۔ حکومت سندھ کی جانب سے گندم غائب کرکے کیاپیغام دیا گیا ہے؟بلاول زرداری بتائیں کہ غریب کوگندم کب ملے گی۔بلاول زرداری بتائیں سندھ کے لوگوں کو کس جرم کی سزادی جارہی ہے۔ایک طرف بلاول دبئی میں عیاشیاں اورشاپنگ کررہے ہیں۔زرداری صاحب بھی آرام فرما رہے ہیں۔ صوبے کے نالائق اعلی کوکچھ نہیں پتہ۔ساڑھے بارالاکھ ٹن گندم گودام میں پڑی ہے۔خرم شیر زمان نے مزید کہا کہ پیپلزپارٹی نے کل ریلی نکالی۔ہم پریشان تھے ایساکیاکارنامہ سرانجام دیدیاجوریلیاں نکال رہے ہیں۔ بلاول زرداری کی حیثیت ایک یونین کاؤنسل جیتنے کی نہیں ہے۔پیپلز پارٹی کے صوبائی وزراء ناکام ہوگئے ہیں۔ بلاول زرداری ان وزراء کی جگہ خواتین کوذمہ داری دیں۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ اب پی ٹی آئی بھی پیپلزپارٹی کے خلاف ریلی نکالے گی۔وفاقی حکومت کی بہترکارکردگی کے باعث ان کی سیاست دفن ہورہی ہے۔سندھ میں گندم کابحران اٹھرہا ہے۔سارے بلیک میلرزسرگرم ہیں۔ ہماری درخواست ہے کہ چیف جسٹس اس معاملے کی تحقیقات کا حکم دیں۔سندھ میں گندم کی بوریوں سے ریتی بجری نکلتی ہے۔ہمیں خدشہ ہے کہ کہیں گندم کی وجہ سے فسادات نہ جنم لیں۔

مزید :

صفحہ آخر -