مردان میں آتشزدگی کے  واقعہ میں ماں بیٹی کی ہلاکت  کا ڈراپ سین،ملزم گرفتار

مردان میں آتشزدگی کے  واقعہ میں ماں بیٹی کی ہلاکت  کا ڈراپ سین،ملزم گرفتار

  

مردان (بیورورپورٹ) ہوتی کے علاقہ مایار روڈ پر آتشزدگی کے واقعے میں ماں بیٹی کی پراسرار ہلاکت کے واقعے کا ڈراپ سین ہوگیا، دوہرے قتل میں ملوث میں ملزم کو گرفتارکرلیا چند دن قبل تھانہ ہوتی کے حدود میں معیار روڈ پر واقع مہمند پٹرول پمپ کے قریب گھر میں آگ لگی تھی جس میں ایک خاتون اپنی کمسن بچی سمیت شدید جھلس کر جاں بحق ہوئی تھی اس دوران پولیس اور ریسکیو نے دونوں لاشوں کو پوسٹمارٹم کیلئے ہسپتال منتقل کئے اور ابتدائی طورپر واقع کو بجلی کی شارٹ سرکٹ قرار دیاتھا۔ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر ڈاکٹر زاہد اللہ خان نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے تفتیشی ٹیم تشکیل دی ایس ایچ او ہوتی انسپکٹر عاشق حسین اور تھانہ ہوتی کے سٹی کے ایس ایچ او مقدم خان نے تفتیشی آفیسر میرا خان کے ہمراہ میڈیا کو بتایاکہ پولیس نے شک کی بناء پرخاتون کو مکان کرایہ لینے والا شخص محمد عرفان کوشامل تفتیش بنالیااس دوران اُنہوں نے تمام راز اگل دیئے اور پولیس کو بتایاکہ خاتون کیساتھ تعلقات تھے اور شادی کی عرض سے یہاں کرایہ کے مکان میں ایک سال سے رہائش پذیر تھی وقوعہ کے روز میرے اور خاتون مسماۃ(ش)کیساتھ شادی کے معاملہ پر زبانی تکرار ہوئی تھی کیونکہ میں پہلے ہی سے شادی شدہ تھا اور خاتون سے چھٹکارا حاصل کرنے کیلئے کمرے میں پیٹرول سے آگ لگائی جس سے خاتون اور اسکی کمسن بیٹی جھلس کر جاں بحق ہوگئی پولیس نے مقتولہ کے والد جاوید خان کی رپورٹ پر ملزم کیخلاف دوہرے قتل کا مقدمہ درج 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -