حکومت علماء اہلسنت پر قائم مقدمات ختم کرے‘ قاری ناصر میاں 

حکومت علماء اہلسنت پر قائم مقدمات ختم کرے‘ قاری ناصر میاں 

  

 ملتان (سٹی رپورٹر)جانشین پیرطریقت قاری ناصر میاں خان نقشبندی مجددی نے کہا ہے کہ اس وقت صحابہ کرام ؓ اور اہل بیت ؓ کی عظمت ہمارے ایمان کا جز ہے اہل سنت نے ہمیشہ اہل بیت ؓ اور صحابہ کرام ؓ کی عظمت اور حرمت پر جان دینے سے گریز نہیں کیا حکومت سے (بقیہ نمبر30صفحہ 6پر)

مطالبہ کرتے ہیں علماء اہل سنت پر قائم مقدمات فوراََ ختم کئیے جائیں اور علماء کرام کو بری کیا جائے پیرطریقت مولانا حامد علی خاں نقشبندی ؒ نے پوری زندگی جید کے خلاف جدوجہد کی اور درسگاہوں سے نکل کر رسم شبیری ادا کی ان خیالات کا اظہار انہوں نے ملتان کے بے تاج بادشاہ پیرطریقت مولانا حامد علی خاں ؒ کے 42ویں اور جانشین پیرطریقت قاری احمد میاں خان ؒ کے دوسری سالانہ عرس مبارک کی پہلے روز کی دوسری نشست میں صدارتی خطاب کرتے ہوئے کیا قاری معصوم حامد،قاری نعمان حامد،سجادہ نشین آستانہ عالیہ چادر والی سرکار پیر سید ولی محمد ثانی سرکار مہمان خصوصی تھے خطیب پاکستان علامہ فاروق القادری نے کہا کہ روحانی مرشد کی پہچان ایسی ہے کہ بندہ اصل اور نقل میں تمیز نہیں کرتے مرشد کی پہچان سنت نبویؐ کی تکمیل ہوتی ہے گندے لباس اور خلاف سنت عمل کا تصوف سے کوئی تعلق نہیں ہے ہمارے معاشرے میں ایک بیماری عام ہے بدنظری سے بچنا آج کے دور میں انتہائی مشکل ہے بدنگاہی کی وجہ سے ایسا بھی ہوسکتا ہے کہ مرتے وقت کلمہ نصیب نہ ہو آج کے معاشرے خانقاہی نظام کی اس تصویر سے ضرورت ہے جس میں مرشد چٹائی پر بیٹھ کر مریدین کو اصلاح اور تصوف پر درس دیا کرتے تھے آج کے دور میں یہ عمل مرشد کی ضرورت بڑھ گئی مولانا روم نے فرمایا ایک مرشد کی صحبت سوسالہ عبادت سے بہتر ہے جو شخص کسی مرشد کامل کی صحبت میں چند گھنٹے بیٹھا وہ بدبخت نہیں رہتا اس کو سخی اور شہدا کے درمیان جگہ دیتا ہے جب شیخ کامل کا قرب نصیب ہوتا ہے تو بندہ کیف سرور میں مبتلا ہوتا ہے اور جب نگاہ مرشد سے دور ی اختیار کرتا ہے تو بندہ اذھان اور مشکلات میں مبتلا ہوجاتا ہے کامل مرشد کا قرب ہوتو ایسا درجہ ملتا ہے کہ کشف المحبوب کو تصوف کا خزانہ ملتا ہے جب دل کو قلبی سکون اور اطمینان باعمل مرشد کامل کی شکل میں ملتا ہے مرشد کو ذمہ مریدین کی اصلاح اور تربیت ہے نقس کو حرص سے بچالو رب تمہیں نجاست اور گندگی سے بچالے گا پیر طریقت مولانا حامد علی خاں نقشبندیؒ نے تمام عمر تصوف اور روحانی فیوض کی بارش کی آج بھی ان کے مزار سے فیوض کا سمندر جاری ہے محفل میں حامد سلطانی،محمد ادریس گل،غضنفر عباس نے ہدیہ نعت پیش کی پہلے روز کی دوسری نشست میں محمد فوزان رضوی،حافظ منظور الٰہی،محمد ثمر حامدی،مولانا عطاء محمد نقشبندی،مفتی محمد اسلم فیضی،حاجی محمد ایوب،مفتی محمد نعیم،قاری توفیق حامدی،حاجی سجاد حامدی،قاری ممتاز چشتی،حافظ مبشر حامدی،محمد الیاس حامدی،محمد شکیل حامدی، مریدین اور عقیدت مندوں نے کثیرتعداد میں شرکت کی۔ 

قاری ناصر میاں 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -