کروڑوں کا فراڈ‘ مجرم کو ساڑھے 3 سال قید‘ بھاری جرمانے کی سزا

کروڑوں کا فراڈ‘ مجرم کو ساڑھے 3 سال قید‘ بھاری جرمانے کی سزا

  

ملتان (خصو صی رپورٹر)  احتساب عدالت ملتان کے جج راجہ صفدر اقبال نے شہریوں کو منافع دینے کی مد میں کروڑوں روپے سرمایہ داری میں لگوانے اور ان کی اصل رقم اور(بقیہ نمبر31صفحہ 6پر)

 منافع واپس نہ کرنے والے ملزم کو تمام ثبوتوں اور گواہوں کی روشنی میں جرم ثابت ہونے پر ساڑھے تین سال قید اور ایک کروڑ 80 لاکھ روپے جرمانہ ادا کرنے کی سزا سنائی ہے جرمانہ ادا جہ کرنے کی صورت میں ملزم کو مزید چھ ماہ جیل بھی کاٹنی ہو گی۔ قبل ازیں فاضل عدالت میں قومی احتساب بیورو کی جانب سے سال 2015 میں ملزم شیخ ذکا الرحمان کے خلاف ریفرنس دائر کیا گیا ملزم کا تعلق بورے والا ضلع وہاڑی سے ہے جو بہاوالدین کریانہ سٹور اور جنرل پبلک کا مالک تھا ملزم نے گیارہ مختلف شہریوں سے دو کروڑ 29 لاکھ 28 ہزار روپے کی رقم سرمایہ داری کے لیے حاصل کی لیکن ملزم نے شکایت کنندگان کو نہ رقم واپس کی اور نہ ہی اس پر لگا منافع دیا گیا جس پر شہریوں نے نیب سے رجوع کیا ملزم کو اس گھناونے الزام میں میں ملوث کر کے ریفرنس تیار کیا گیا تاہم ملزم تفتیش کے دوران  پیروی کے لیے پیش نہ ہوا جس پر عدالت نے ملزم کو اشتہاری قرار دیا تھا تاہم ملزم کی گرفتاری عمل میں لائی گئی اب گزشتہ روز سماعت پر عدالت نے ملزم کو دیگر سزاؤں کے ساتھ اشتہاری ہونے کے جرم میں بھی ایک سال کی سزا سنائی ہے۔

فراڈ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -