چیئرمین نیب کی تقرری اور مجوزہ  آرڈیننس  ، وفاقی وزیر شبلی فراز نے ایسی بات کہہ دی کہ اپوزیشن بھی دنگ رہ جائے

چیئرمین نیب کی تقرری اور مجوزہ  آرڈیننس  ، وفاقی وزیر شبلی فراز نے ایسی بات ...
چیئرمین نیب کی تقرری اور مجوزہ  آرڈیننس  ، وفاقی وزیر شبلی فراز نے ایسی بات کہہ دی کہ اپوزیشن بھی دنگ رہ جائے

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) وفاقی وزیر برائے سائنس و ٹیکنالوجی سینیٹر شبلی فراز نے کہا ہے کہ نئے آرڈیننس کے بعد وزیر اعظم یا اپوزیشن لیڈر میں سے کسی پر الزامات ہیں تو وہ قومی احتساب بیورو(نیب)کے چیئرمین کی تقرری میں حصہ نہیں لے سکیں گے۔

نجی ٹی وی سےگفتگو کرتے ہوئے سینیٹر شبلی فراز کا کہنا تھاکہ نیب آرڈیننس میں کیسز کو جلد انجام تک پہنچانے کی شق بھی شامل کی جارہی ہے۔ان کا کہنا تھاکہ نئے آرڈیننس کے بعد وزیر اعظم یا اپوزیشن لیڈر میں سے کسی پر الزامات ہیں تو وہ چیئرمین نیب کی تقرری میں حصہ نہیں لے سکیں گے، چیئرمین نیب کے گرفتاری کے اختیارات کو محدود کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ چیئرمین نیب جسٹس(ر) جاوید اقبال کی مدت ملازمت 8 اکتوبر کو ختم ہورہی ہے اور گزشتہ روز ڈپٹی چیئرمین نیب حسین اصغر نے عہدے سے استعفیٰ دے دیا تھا۔حکومت نے چیئرمین نیب سے متعلق آرڈیننس تیار کرلیا ہے جسے آج(بدھ کو ) وزیراعظم کو پیش کیا جائے گا۔

مزید :

قومی -