بجلی اور مہنگی ہو گئی! وزیراعظم توجہ دیں!

بجلی اور مہنگی ہو گئی! وزیراعظم توجہ دیں!

  

حکومت کی طرف سے بجلی کے نرخوں میں مزید اضافہ کر دیا گیاہے،ابتدائی طور پر یہ ایک سال کے لیے بتایا گیا ہے،بجلی  فی یونٹ کی قیمت 16.44 روپے سے بڑھ کر18.16 روپے ہو گئی ہے  یوں صرف اِس اضافے سے صارفین پر90 ارب روپے کا بوجھ پڑے گا،اِس کا مطلب یہ کہ حکومت کے ریونیو میں اتنا اضافہ ہو گا اورابھی گذشتہ روز وزیراعظم ایک تقریب سے خطاب کے دوران دوسرے ممالک سے پٹرولیم اور اجناس کی قیمتوں کا موازنہ کر کے بتا رہے تھے کہ پاکستان میں آج بھی یہ اشیاء دنیا کے مقابلے میں سستی ہیں۔ وزیراعظم کو یہ اعداد و شمار یقینا ان کے رفقا اور متعلقہ حکام نے بتائے ہوں گے۔تاہم اس موازنے کے ساتھ کسی نے یہ نہیں بتایا کہ دوسرے ملکوں کی فی کس آمدنی پاکستان کے مقابلے میں کتنی زیادہ ہے؟ ترقی یافتہ ممالک کی بات تو ایک طرف، اب تو بھارت اور نہ صرف  بنگلہ دیش کی فی کس آمدنی میں بھی (ہمارے مقابلے میں) اضافہ ہو رہا ہے۔الفاظ کی جادوگری سے گرانی کا قد واپس  نہیں لاییا جاسکتا ہے۔

مزید :

رائے -اداریہ -