امریکہ کے دیوالیہ ہونے کا خدشہ، جوبائیڈن نے حزب اختلاف سے مدد مانگ لی 

       امریکہ کے دیوالیہ ہونے کا خدشہ، جوبائیڈن نے حزب اختلاف سے مدد مانگ ...

  

         واشنگٹن(آن لائن) امریکہ کے صدر جو بائیڈن نے حزب اختلاف کے راہنماؤں پر سخت تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ ملک کے لیے قرضوں کی حد بڑھانے کے لیے ڈیموکریٹس کی راہ میں رکاوٹیں کھڑی کر رہے ہیں قرضوں کی حد بڑھانے کا مقصد 18 اکتوبر کو ملک کو ممکنہ دیوالیہ کے خطرے سے بچانا ہے کیوں کہ 18 اکتوبر کو حکومت کے پاس اپنے اخراجات کے لیے رقوم ممکنہ طور پر ختم ہو جائیں گی. صدر جو بائیڈن نے کہا ہے کہ وہ اس بات کی ضمانت نہیں دے سکتے کہ امریکہ پہلی مرتبہ ڈیفالٹ نہیں کرے گا انہوں نے کہا کہ اس بات کا انحصار سینیٹ میں ری پبلکن رہنما مچ میکونل پر ہے کہ وہ سینیٹ میں ڈیمو کریٹس کو اپنے طور پر قرضوں کی موجودہ حد28.5 ٹریلین ڈالر سے بڑھانے کی اجازت دیں. امریکی نشریاتی ادارے کی رپورٹ کے مطابق بائیڈن نے وائٹ ہاؤس میں صحافیوں سے گفتگو کے دوران ری پبلکنز کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ اگر آپ ملک کو بچانے میں مدد نہیں کر سکتے تو راستے سے ہٹ جائیں اس کو تباہ نہ کریں صدر بائیڈن نے کہاکہ اگر حکومت قرضوں کی وجہ سے ڈیفالٹ کر جاتی ہے تو اس کے ذمہ دار ری پبلکنز ہوں گے. معاشی ماہرین کا خیال ہے کہ ڈیفالٹ کے امریکی اسٹاک انڈیکس اور عالمی معیشت پر سنگین نتائج مرتب ہوں گے اور ممکنہ طور پر حکومت مجبور ہو جائے کہ وہ بزرگ امریکی شہریوں کو پینشن یا حکومتی کانٹریکٹرز کو وقت پر تنخواہیں نہ دے سکے۔

جو بائیڈن

مزید :

صفحہ آخر -