کے پی نیشنل ہاکی لیگ کی  افتتاحی تقریب و میچز کا آغاز

  کے پی نیشنل ہاکی لیگ کی  افتتاحی تقریب و میچز کا آغاز

  

پشاور(ملک حشمت سے)پشاور سپورٹس کمپلیکس میں پہلے کے پی نیشنل ہاکی لیگ کی افتتاحی تقریب منعقد ہوئی خیبر پختونخواہ سپورٹس ڈائریکٹریٹ کے زیر انتظام ہونیوالے اس کے ہاکی لیگ میں آٹھ مختلف ٹیمیں حصہ لے رہے ہیں جس میں قومی سینئر اور جونئیر ٹیموں کیساتھ ساتھ ریجنل ٹیموں کے کھلاڑیوں کو سلیکشن کے بعد کھیلنے کا موقع مل رہا ہے- افتتاحی تقریب لالہ ایوب ہاکی سٹیڈیم پشاور کے آسٹرو ٹرف پر منعقد ہوئی جس کے مہمان خصوصی سپیکر صوبائی اسمبلی مشتاق غنی تھے جبکہ اس تقریب میں سیکرٹری سپورٹس عابد مجید ' ایم ڈی بینک آف خیبر ' ڈائریکٹر جنرل سپورٹس خیبر پختونخواہ اسفندیار خٹک خیبر پختونخواہ ایسوسی ایشن کے سعید خان صدر ظاہر شاہ و ایسوسی ایشن کے دیگر عہدیداروں سمیت کھیلوں کے شعبوں سے وابستہ افراد اور آٹھ مختلف ٹیموں کے مالکان بھی شریک ہوئے.تقریب کا باقاعدہ آغاز تلاوت کلام پاک سے کیا گیا جس کے بعد قومی ترانے کے احترام میں تمام حاضرین کھڑے ہوگئے اور بعد ازاں آٹھ ٹیموں کے کھلاڑیوں نے اپنے کوچز و مینجرز کے ہمراہ مارچ پاسٹ کیا ' سب سے آخر میں بینڈ کی خوبصورت دھن نے سب کی توجہ اپنی طرف دلائی تقریب میں سابق اولمپین رحیم خان نے تمام ٹیموں کے کپتانوں سے حلف لیا ' اس موقع پر سپیکر خیبر پختونخواہ اسمبلی نے ڈائس کا رخ کیا اور باقاعدہ کھیلوں کے آغاز کا اعلان کردیا گیا ' بعد ازاں سپیکر اسمبلی نے ٹیم کے کپتانوں اور مالکان سے بھی ملاقاتیں کیں.جس کے بعد فضا میں آتش بازی کا خوبصورت مظاہرہ بھی کیا گیا.کے پی ہاکی لیگ کیلئے باقاعدہ سونگ بھی مقامی فنکار نے تیار کیا تھا جو کہ افتتاح کے موقع پر گلوکار نے سنایا.یہ ہاکی لیگ کم و بیش پندرہ اکتوبر تک صوبے کے مختلف علاقوں کے آسٹرو ٹرف پر کھیلا جائیگا جس میں پشاور ' مردان ' چارسدہ ' بنوں اور ڈی آئی خان کے آسٹرو ٹرف شامل ہیں ان مقابلوں کے انعقاد میں ہاکی ایسوسی ایشن خیبر پختونخواہ کی ٹیم بھی بڑی فعال نظر آئی.ہاکی لیگ کے پہلے روز پہلے میچ میں ملاکنڈ ٹائیگرز کی ٹیم نے بنوں پینتھرز کی ٹیم کو تین صفر سے شکست دی. تاریخی اسلامیہ کالج پشاور یونیورسٹی کی نئے بنن لے آسٹروٹرف پر کھیلے جانیوالے پہلے میچ میں آسٹرو ٹرف پر کھیلنے کیلئے کھلاڑیوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا کیونکہ آسٹرو ٹرف مکمل طور پر خشک تھا انتظامیہ کے مطابق بجلی کی لوڈشیڈنگ کی وجہ سے پانی نہیں دیا گیا تھا جس کی وجہ سے کھلاڑی ڈر ڈر کر کھیلتے رہے بعد ازاں مقامی کھلاڑیوں نے اپنے ٹیم کو سپورٹ کرنے کے خاطربالٹیوں میں پانی بھر بھر کر آسٹرو ٹرف پر پھینکا تاکہ کھلاڑی کھیل کے دوران کسی قسم کے حادثے کا شکار نہ ہوں.اس ہاکی لیگ کی فیورٹ ٹیم بنوں کی ٹیم تھی تاہم حیرت انگیز طور پر وہ اپنے پہلے ہی میچ جو کہ ملاکنڈ ٹائیگرز کی ٹیم کیساتھ تھا میں بری طرح ہار گئے تاہم کھیل کے دوران انہوں نے بھرپور طریقے سے اپنے مخالف پر حملے کئے اور کھلاڑی بھاگ بھاگ کربال کو مخالف کی ڈی تک پہنچانے کی کوشش کرتے ہے تاہم یہ اعزاز ملاکنڈ ٹائیگرز کے حصے میں آیا کہ انہوں نے اپنے مخالف بنوں پینتھرز کی ٹیم کو چوبیسویں ' چالیسویں اورچون ویں منٹ میں ٹیم کی برتری دلائی جو آخر ی وقت تک جاری رہی اور یوں یہ پہلا میچ جو کہ اسلامیہ کالج گراؤنڈ کے حال ہی وزیراعلی کے ہاتھوں افتتاح ہونیوالے آسٹرو ٹرف پر ملاکنڈ کی ٹیم نے اپنی فتح کا آغاز کردیا- ٹیم کے اونر وجیہہ خان کے مطابق وہ ابتدا میں ذہنی تناؤ کا شکار تھے لیکن کھلاڑیوں کی ان تھک محنت کے باعث ہم نے اپنی فتح کا آغاز کردیا ہے اور اب انشا اللہ اس فتح کو اختتام تک لے جائینگے.

مزید :

پشاورصفحہ آخر -