جہاز میں سفر کے دوران وہ وقت جب ایئر ہوسٹس کو بالکل بھی نہیں بلانا چاہیے

جہاز میں سفر کے دوران وہ وقت جب ایئر ہوسٹس کو بالکل بھی نہیں بلانا چاہیے
جہاز میں سفر کے دوران وہ وقت جب ایئر ہوسٹس کو بالکل بھی نہیں بلانا چاہیے

  

کنبرا(مانیٹرنگ ڈیسک) بعض مسافروں کی عادت ہوتی ہے کہ جہاز کے ٹیک آف یا لینڈنگ کے دوران بھی ایئرہوسٹس کو بلانے کے لیے بٹن دبا دیتے ہیں۔ اب اس حوالے سے معروف ایئرہوسٹس کیٹ کیملانی نے مسافروں کو سخت تنبیہ کر دی ہے۔ کیٹ کیملانی، جو ٹک ٹاک پر کافی مشہور ہو چکی ہیں، نے بتایا ہے کہ جو مسافر ٹیک آف اور لینڈنگ کے وقت بٹن دبا کر ایئرہوسٹس کو بلاتے ہیں، ایسے لوگ عملے کو سخت ناپسند ہوتے ہیں۔

کیٹ کیملانی بتاتی ہے کہ ”آپ کو ٹیک آف سے قبل اور لینڈنگ کے وقت انتہائی ایمرجنسی کے علاوہ کبھی بھی بٹن نہیں دبانا چاہیے۔ یہ ایئرہوسٹسز کے تحفظ کا مسئلہ ہوتا ہے۔ ان اوقات میں اگر ایئرہوسٹس آپ کے پاس آتی ہے تو وہ زخمی بھی ہو سکتی ہے اور یہ حرکت آپ کو بھی نقصان پہنچا سکتی ہے۔“

کیٹ نے مزید بتایا کہ ”عام طور پر ان اوقات میں بٹن دبا کر ایئرہوسٹس کو بلانے کی کوشش بیکار ہی جاتی ہے کیونکہ اس وقت ایئرہوسٹسز یا تو مسافر کی بات سننے جاتی ہی نہیں اور اگر ایمرجنسی کے خیال سے چلی جائیں اور ایمرجنسی نہ ہو تو وہ انتہائی غصے میں مسافر کا مطالبہ پورا کیے بغیر واپس چلی جاتی ہیں۔لہٰذا آپ کو اگر کمبل، پانی، کھانا، ہیڈ فون یا دیگر اس نوع کی کوئی چیز چاہیے تو جہاز کے ٹیک آف کا انتظار کریں اور پھر ایئرہوسٹس کو بلائیں۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -