ملتان روڈ پر ناکہ، تین ہزار سے زائد لیٹر ملاوٹی دودھ تلف

ملتان روڈ پر ناکہ، تین ہزار سے زائد لیٹر ملاوٹی دودھ تلف

  

 ملتان (سپیشل رپورٹر) ڈی جی پنجاب فوڈ اتھارٹی کی ہدایات پر فوڈ سیفٹی ٹیمیں ملاوٹ مافیا کے خلاف سرگرم عمل ہیں (بقیہ نمبر17صفحہ6پر)

۔ تفصیلات کے مطابق ملتان میں کریانہ سٹور کو خوراک کو زمین پر سٹور کرنے پر 10 ہزار روپے جرمانہ عائد کیا گیا۔ اسی طرح ملتان میں  ممنوعہ اجزاء فروخت کرنے پر ڈرنک کارنر کو 10 ہزار روپے جرمانہ کیا گیا۔ اس کے علاؤہ ملتان میں ہوٹل کو فریزر میں خوراک کی نامناسب سٹوریج پر 10 ہزار روپے جرمانہ عائد کیا گیا۔ مزید 2 فوڈ پوائنٹس کو خوراک کو ڈھانپ کر نہ رکھنے اور سبزیوں کو زمین پر سٹور کرنے پر 20 ہزار روپے جرمانہ عائد کیا گیا۔ اس کے علاؤہ خانیوال میں 2 کریانہ سٹورز کو ناقابلِ سراغ اشیاء فروخت کرنے، مکڑیوں کے جالے پا? جانے پر 35 ہزار روپے جرمانہ کیا گیا۔ اسی طرح وہاڑی میں 2 مختلف فوڈ پوائنٹس کو ایکسپائرڈ اشیاء فروخت کرنے، صفائی کے انتہائی ناقص انتظامات پر 30 ہزار روپے جرمانہ کیا گیا۔ مزید برآں لودھراں میں ایکسپائرڈ مصالحہ جات فروخت کرنے پر کریانہ سٹور کو 15 ہزار روپے جرمانہ عائد کیا گیا۔ اس موقع پر ڈی جی پنجاب فوڈ اتھارٹی مدثر ریاض ملک کا کہنا تھا ملاوٹ مافیا کے خلاف کارروائیاں جاری ہیں۔

ڈیرہ غازیخان (سٹی رپورٹر) ڈی جی فوڈ اتھارٹی مدثر ریاض ملک کی ہدایت پر ملاوٹ سے پاک پنجاب مہم جار(بقیہ نمبر16صفحہ6پر)

ی، فوڈ سیفٹی ٹیم کی ملتان روڈ اور قریشی چوک پر ناکہ بندی، 3 ہزار 180 لٹر ملاوٹی دودھ موقع پر تلف کردیا گیا، ملاوٹی دودھ سپلائی کرنے والے گاڑی مالکان کو بھاری جرمانے عائد کردیے گئے۔ڈی جی پنجاب فوڈ اتھارٹی کی ہدایات پر دودھ میں ملاوٹ کرنے والے عناصر کیخلاف پنجاب فوڈ اتھارٹی کے آپرینشنز جاری و ساری ہیں۔ فوڈ سیفٹی ٹیموں نے مظفرگڑھ میں ناکہ بندی کے دوران متعدد دودھ بردار گاڑیوں کو چیک کیا۔ سیمپل فیل ہونے پر 3 گاڑیوں میں موجود ملاوٹی دودھ تلف کیا گیا۔ دودھ میں پانی اور ڈیٹرجنٹس کی ملاوٹ پائی گئی۔ دودھ میں قدرتی غذائیت اور چکنائی کی کمی پائی گئی۔ کارروائی کے دوران ہزاروں لٹر ملاوٹی دودھ موقع پر تلف کردیا گیا۔ ملاوٹی دودھ مظفرگڑھ اور مضافاتی علاقوں میں لوکل ملک شاپس، ہوٹلوں پر سپلائی کیا جارہا تھا۔ اس موقع پر ڈی جی فوڈ اتھارٹی مدثر ریاض ملک کا کہنا تھا کہ ملاوٹی دودھ مافیا کیخلاف روزانہ کی بنیاد پر ناکہ بندی کی جا رہی ہے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -