وزیراعظم آزاد کشمیر نے اپنے وزیرقانون کی طرف سے سابق ہم منصب راجہ فاروق حیدر کو موبائل فون مارنے پر معافی مانگ لی

وزیراعظم آزاد کشمیر نے اپنے وزیرقانون کی طرف سے سابق ہم منصب راجہ فاروق حیدر ...
وزیراعظم آزاد کشمیر نے اپنے وزیرقانون کی طرف سے سابق ہم منصب راجہ فاروق حیدر کو موبائل فون مارنے پر معافی مانگ لی

  

مظفر آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) وزیراعظم آزاد کشمیر سردار تنویر نے اپنے وزیرقانون کی طرف سے سابق وزیراعظم راجہ فاروق حیدر کو موبائل فون مارنے پر معافی مانگ لی۔ نجی ٹی وی چینل 24نیوز کے مطابق سردارتنویر نے قانون ساز اسمبلی کے اجلاس میں خطاب کے دوران راجہ فاروق حیدر سے معافی مانگی۔

انہوں نے کہا کہ ”میں فاروق حیدر سے معافی مانگتا ہوں، میرے وزیر نے جو کیا، اس پر مجھے بے حد افسوس ہے۔میں اپوزیشن لیڈر چوہدری لطیف اکبر کے خلاف بولے گئے الفاظ پر بھی معافی مانگتا ہوں۔ وہ میرے بڑے بھائی ہیں اور میں راجہ فاروق حیدر کی بھی عزت کرتا ہوں۔ چوہدری لطیف اکبر نے وزیراعظم کی معافی قبول کر لی تاہم ان کا کہنا تھا کہ وہ فہیم ربانی کو کابینہ سے نکالنے کے مطالبے سے دستبردار نہیں ہوں گے۔

واضح رہے کہ دو روز قبل اسمبلی اجلاس میں ہنگامہ آرائی کے دوران تحریک انصاف کے وزیر نے مسلم لیگ ن کے رہنماءاور سابق وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر کو موبائل فون دے مارا تھا اور اپوزیشن لیڈر چوہدری لطیف اکبر کے خلاف بھی اسمبلی میں نازیبا زبان استعمال کی گئی تھی۔

مزید :

علاقائی -آزاد کشمیر -