ملک کی بقا اور خوشحالی کا انحصارتوانائی منصوبوں پر ہے: عبدالباسط

ملک کی بقا اور خوشحالی کا انحصارتوانائی منصوبوں پر ہے: عبدالباسط

لاہور (کامرس رپورٹر)لاہور چیمبر الیکشن میں صدارتی امیدوار عبدالباسط نے کہا ہے کہ ملک کی بقا اور خوشحالی کا انحصار بجلی کے منصوبے جلد از جلد مکمل کرنے صنعتکاری کا نیٹ پھیلانے اور کاروباری سرگرمیاں بڑھانے میں ہے۔ اپنے بیان میں عبدالباسط نے کہا ہے کہ ایوانہائے صنعت و تجارت اجتماعی اور کاروباری طبقہ انفرادی طور پر ہر گز پسند نہیں کرتا کہ آئینی اداروں اور عدلیہ کی موجودگی کے باوجود سیاست دان حصول انصاف کے لیے سڑکو ں پر کنٹینر چلا کر ملک کو اربوں روپے کا نقصان اور عوام کو آمد و رفت میں مشکلات پیدا کریں عبدالباسط نے کہا ہے کہ الطاف حسین نے کئی برس تک بیرون ملک بیٹھ کر پاکستان کی کاروباری شہ رگ کراچی کو لہو لہاں کیا اور کاروبار تباہ کیئے۔

کاروباری طبقہ اپنے کاروباری بند کرنے یا بیرون ملک منتقل کرنے پر مجبور ہو گیا انہوں نے کہا ہے کہ مودی الطاف گٹھ جوڑ پاکستان کے بڑے ترقیاتی منصوبوں کے لیے زہر قاتل ہے اس لیے عبدلباسط نے کہا ہے کہ سیاست دان کنٹینر احتجاجوں کے ذریعے ملک کے کاروباری حالات خراب کرنے اور مودی الطاف سازشوں کو تقویت دینے کی بجائے اپنے اتحاد و اتفاق کی طاقت سے مودی الطاف سازشوں کو منہ توڑ جواب دیں عبدالباسط نے کہا ہے کہ پاکستان کا کاروباری طبقہ کام کرنا اور صنعتکاری کا نیٹ پھیلانا چاہتا ہے تاکہ تعمیر وطن میں اپنا کردار بڑھایا جا سکے اس لیے عبدالباسط نے سیاست دانوں پر زور دیا ہے کہ منفی سرگرمیوں اور انتقامی نعروں کو ترک کرکے مثبت سرگرمیوں کو فروغ کا باعث بنیں تاکہ ملک ترقی عوام کو ریلیف اور سیاست دانوں کی نیک نامی میں اضافہ ہو سکے

مزید : کامرس