لائن لاسز کا چکر بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ جاری دائرہ دین پناہ میں احتجاجی مظاہرہ ، شہر میں سوئی گیس بحران تھم نہ سکا

لائن لاسز کا چکر بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ جاری دائرہ دین پناہ میں ...

 ملتان، رنگ پور، دائرہ دین پناہ(سٹاف رپورٹر، خبر نگار خصوصی، نمائندگان) ملتان سمیت میپکو ریجن میں بدترین لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے ‘ گزشتہ روز بھی 18گھنٹے تک دورانیہ رہا ‘وولٹیج کی کمی اور ٹرپنگ کا سلسلہ بھی جاری رہا جس کے باعث صارفین خصوصاً بچوں اور مریضوں کو شدید تکلیف ہوئی۔ دریں اثناء شہر کے مختلف علاقوں میں گیس لوڈشیڈنگ اور پریشر میں کمی کا سلسلہ جا ر ی ۔شہر کے بیشتر علا قو ں میں گیس مکمل بند۔ کسی وقت بھی گیس کی سپلائی منقطع کردی(بقیہ نمبر33صفحہ7پر )

جاتی ہے ،جس کی وجہ سے گیس صارفین کو شدید مشکلات کا سامان کرنا پڑتا ہے، گیس بندش کی وجہ سے شہر یوں کو لکڑیاں جلا کر گزر اوقات کرنا پڑتاہے۔ شالیمار کالونی‘ ایم ڈی اے چوک‘ پرانا شجاع آباد روڈ‘ معصوم شاہ روڈ‘ جلیل آباد‘ شریف پورہ‘ ممتاز آباد حسن آباد گیٹ نمبر 1اور 2‘ قیصر آباد‘ قذافی چوک‘ پیراں غائب روڈ‘ سمیجہ آباد‘ مدنی چوک‘ گلشن مارکیٹ‘ شاہ رکن عالم‘ گجرکھڈا،حسن پروانہ،حرم گیٹ،دہلی گیٹ ،پاک گیٹ ،لو ہاری گیٹ،منظور آباد۔کینٹ۔گھنٹہ گھر،،ڈبل پھا ٹک،و لائیت آباد ۔سمیت شہر کے اندرون و بیرون علا قوں میں رات 9بجے کے بعد کسی وقت بھی گیس کی سپلائی منقطع کردی جاتی ہے جبکہ چند ایک جگہوں پر گیس کی سپلائی تو بحال ہوتی ہے مگر اتنی گیس بھی نہیں ہوتی کہ چائے کا کپ بھی بنایا جاسکے۔ رنگ پور سے نامہ نگار کے مطابق رنگ پور اور گردونواح کے علاقوں میں میپکو حکام کی غیر علانیہ لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ بدستور جاری ہے جس سے کاروبارزندگی ٹھپ ہو کر رہ گیا ہے جس پر عوامی سماجی حلقوں نے میپکو حکام کے خلاف حتجاج کرتے ہوئے غیر علاینہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ ختم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ دائرہ دین پناہ سے نمائندہ خصوصی کے مطابق دائرہ دین پناہ لوڈ شیڈنگ کیلئے ٹارگٹ اپنا لائن لاسز پورا کرنے کیلئے ۲۰ گھنٹے دائرہ فیڈر بند شہری اس قیامت خیز گر می میں تڑپتے رہے عوام کا ایکسین واپڈا کے خلاف احتجاج ۔ تفصیل کے مطابق واپڈا ایکسین سردار خان نے دائرہ دین پناہ کو لوڈ شیڈنگ کیلئے ٹارگٹ بنا لیا ۲۰ گھنٹے کی لوڈ شیڈنگ نے شہریوں کا جینا اجیرن کر دیا زندگی کے معمولات درھم بر ھم ۔ لوڈ شیڈنگ کی وجہ سے شہریوں پانی بھی میسر نہ ہے۔ شہریوں نے پر امن احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ دائرہ دین پناہ فیڈر کو ہر ماہ کے آخری ۱۰ دنوں میں دانستہ طور پر اپنا لائن لاسز پورا کرنے کیلئے لوڈ شیڈنگ میں بہت ہی زیادہ اضافہ کر دیا جاتا ہے جبکی ایکسین واپڈا سردار خان فیکٹریوں کے مالکان کے ساتھ اپنا حصہ مختص کر رکھا ہے جنہیں بلا تعطل بجلی کی فراھمی جاری رکھتا ہے انکی سزا ھم بھگت رہے ہیں معصوم بچے ۔ بزرگ۔ مریض ۔ گرمی کی شدت میں تڑپتے رہتے ہیں۔ جبکہ اپنے اس گھنونے کردار کی وجہ سے ایکسین واپڈا متعدد معطل اور تبادلے بھی ہو چکے ہیں مگر با اثر سیا سی سفارشات کی بنا پر دوبارہ کوٹ ادو کی عوام پر مسلط ہو جاتا ہے عوام نے احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ ایکسین واپڈا نے میٹر ریڈروں کو صارفین پر اضافی یونٹ ڈالنے کا حکم دیکر عوام جیتے جی مرنے پر مجبور کر دیا ہے ۔ وزیرا عظم پاکستان ۔ وفاقی وزیرپانی و بجلی واپڈا کے آعلی حکام سے ایکسین واپڈا کی غنڈا گردی کے خلاف فی الفور نو ٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے غلام فرید، محمد شفیق۔ رحمت اللہ۔ اللہ بخش ۔ ریاض حسین۔ ساجد شہزاد۔ ظفراقبال ۔ محمد فاروق۔ غلام صدیق۔ محمد اقبال وغیرہ سراپا احتجاج رہے جب ایکسین واپڈا سے موئقف لیا تو اس نے کہا لیت و لعل سے کام لیتے ہوے کہا کہ میں غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کا نوٹس لیتا ہوں۔ مگر معاملہ مزید گمبھیر ہوتا جا رہا ہے اس معاملہ پر کنٹرول کرنا اس کے بس کا روگ نہ ہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر