آصف علی زرداری کو پاکستان آنے کیلئے کسی سے اجازت لینے کی ضرورت نہیں :مراد علی شاہ

آصف علی زرداری کو پاکستان آنے کیلئے کسی سے اجازت لینے کی ضرورت نہیں :مراد علی ...

لاہو ر(این این آئی ) وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ ملک بھر میں بجلی کی کمی کے مسئلے کا حل صرف سندھ کے پاس ہے ، کئی مرتبہ بجلی پیدا کر کے نیشنل گرڈ میں شامل کرنے کی اجازت مانگی مگر خاطر خواہ جواب نہیں ملا، پانی ہوگا تو ڈیم بنیں گے ٗاس وقت کراچی میں امن کی صورتحال مثالی ہے ، سندھ سے بہتر امن و امان کی صورتحال پو رے ملک میں کہیں نہیں ، پنجاب او رسندھ کو ایک دوسرے کی خوبیوں اور خامیوں سے سیکھنا چاہیے ، آصف علی زرداری کو اپنے ملک میں آنے کے لئے کسی سے اجازت لینے کی ضرورت نہیں ہے وہ جب چاہیں آسکتے ہیں ،ہم جمہوریت پسند قوتوں کے ساتھ چلنا چاہتے ہیں تاکہ غیر جمہوری قوتوں کو موقع نہ ملے ٗ کوئی بھی جماعت سیا سی دفتر بنا کروہاں قانو ن وآئین کے ماورا ء سرگرمیاں انجام دے گی تو ہر صور ت کا رروائی کی جائے گی ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز لاہو رپریس کلب کے پروگرام ’’میٹ دی پریس ‘‘ میں اظہار خیال کرتے ہوئے کیا ۔ اس موقع پر پیپلز پارٹی کے رہنما قمر زمان کائرہ ، چوہدری منظور ، پیپلز پارٹی لائرز ونگ کے وکلاء بھی موجود تھے ۔ وزیر اعلیٰ سندھ سیدمراد علی شاہ نے کہا کہ میرے پا س وقت بہت کم ہے اور مجھ سے امید یں بہت زیا دہ لگا لی گئی ہیں ،کراچی منی پاکستان ہے ، اتنے بڑے شہرکے مسائل کو حل کرنا کوئی آسان کام نہیں ہے لیکن اس وقت کراچی میں امن کی صورتحال مثالی ہے ، اس وقت سندھ سے بہتر امن و امان کی صورتحال پو رے ملک میں کہیں نہیں ہے ،صوبہ سندھ کسی بھی اور صوبہ سے کم صاف اور کم محفوظ نہیں ہے ۔ لاہو رکے صحافیوں کو دعوت دیتا ہوں کہ آئیں اور اپنی آنکھوں سے کراچی اور تھر کو دیکھیں ۔ انہوں نے کہا کہ میں نے پنجاب انفرمیشن ٹیکنالوجی بورڈاور فورنزک لیب کا دورہ کیا ، دونوں ادارے اچھا کام کر رہے ہیں ۔پنجاب او رسندھ کو ایک دوسرے کی خوبیوں اور خامیوں سے سیکھنا چاہیے ۔ ایک سوال پر انہوں نے کہا کہ کا لا باغ ڈیم کی مخالفت میں ملک کی 3اسمبلیاں قرارداد منظور کر چکی ہیں ، پا نی کی فراہمی ہی اصل رکاوٹ ہے ، ہر سال کئی ایسے ادوار آتے ہیں کہ بارشیں نہیں ہوتیں اور کا لا باغ ڈیم کے علاقے میں پانی کا قحط ہو جاتا ہے ، اس لیے پانی ہو گا تو ڈیم بھی بنیں گے ، پانی بچا سکیں گے تو ڈیم بنائیں گے ۔ ایک سوال کے جواب میں سید مراد علی شاہ نے کہا کہ کراچی میں سیاسی جماعت کے پو سٹر ز پھاڑنے کا حکم میں نے نہیں دیا تھا بلکہ وہ عام لو گوں نے غم و غصے میں پھاڑے ،اگر سیا سی دفتر سیا سی سرگرمیوں کیلئے استعمال ہو تو ٹھیک ہے لیکن اگر کوئی بھی جماعت سیا سی دفتر بنا کروہاں قانو ن وآئین کے ماورا سرگرمیاں انجام دے گی تو اس کے خلاف ہر صور ت کا رروائی کی جائے گی ، سندھ میں بہت جلد ایک پروقار تقریب کا انعقاد ہو گا جس میں قومی و ملی یکجہتی کا مثالی مظاہرہ کیا جائے گا ، اس تقریب میں چاروں وزرائے اعلیٰ کو مدعو کیا جائے گا جن میں سے خیبر پختونخوا اور صوبہ پنجاب کے وزیر اعلیٰ نے شرکت کی یقین دہانی کرادی ہے ۔

مزید : علاقائی