حکومت چھوٹے کاروبار کے فروغ کیلئے اقدامات کرئے،ہمایوں پرویز

حکومت چھوٹے کاروبار کے فروغ کیلئے اقدامات کرئے،ہمایوں پرویز

راولپنڈی (جنرل رپورٹر)راولپنڈی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر میاں ہمایوں پرویز نے حکومت پر زور دیا ہے کہ وہ ملک میں چھوٹے اور درمیانے درجے کے کاروبارکے فروغ کے لیے فوری اقدامات کرے۔ عالمی منڈی میں تیل کی گرتی ہوئی قیمتیں درآمدی ملکوں خاص طور پر پاکستان جیسے ملک کے لیے ایک سنہری موقع کی حیثیت رکھتی ہے ہمارا امپورٹ بل کم ہوا ہے ایسے وقت میں تاجر دوست پالیسیوں کے ذریعے ملک میں تجارتی سرگرمیوں کو فروغ دیا جا سکتا ہے۔ آٹو موبل شعبہ حکومتی توجہ کا طالب ہے اس صنعت سے وابستہ افراد کی کثیر تعدا د چھوٹے اور درمیانے درجے کے کاروبارسے تعلق رکھتی ہے اس کے ساتھ ساتھ برآمدات کے فروغ کے لیے روایتی شعبوں سے ہٹ کر دوسرے شعبوں میں بھی سرمایا کاری کے مواقع تلاش کرنا چایئے جن میں ماربل، قیمتی پتھر، زیورات اور انفارمیشن ٹیکنالوجی شامل ہے میاں ہمایوں پرویز نے کہا کہ خطے کے باقی ممالک کے مقابلے میں پاکستان کی برآمدات صلاحیت ہونے کے باوجود بہت کم ہیں چھوٹے تاجروں اور کاٹیج انڈسٹری کے لیے مراعات کا اعلان کیا جائے چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبے کے تحت جہاں جہاں صنعتی زونز قائم کیے جائیں گے وہاں کاٹیج انڈسٹری کے زونز بھی لگائے جائیں تاکے چھوٹے کاروبار ترقی کر سکیں خواتین کی ایک بڑی تعداد گھریلو صنعت جس میں دستکاری سرفہرست ہے اس شعبے کے لیے مزید رعایت دی جائیں تاکہ وہ بھی ملکی ترقی میں اپنا حصہ ڈالیں انہوں نے کہا کہ علاقائی ملک ہم سے آگے نکل چکے ہیں اگر ہم نے مقابلے میں رہنا ہے تو حکومت کو ملک میں تجارتی سرگرمیوں کے فروغ کے لیے ہنگامی اقدامات کرنا ہوں گے جن میں برآمدی مصنوعات پر ٹیکسوں کی شرح میں کمی، ٹرانسپورٹیشن کے لیے دوسرے ملکوں کی منڈیوں تک براہ راست رسائی اور سرحدوں پر کولڈ سٹوریج کی سہولت اور کسٹم اور کارگو کی فوری کلئیرنس شامل ہیں انہوں نے کہا کہ ہمارے ملک میں توانائی کی کمی کے باعث پیداواری لاگت میں اضافہ ہوا ہے جس کی وجہ سے درآمدات میں اضافہ ہوا ہے حکومت کو چایئے کہ وہ توانائی کے منصوبوں کو جلد از جلد مکمل کرے اور صنعتوں کو سستی اور بلا تعطل بجلی کی فراہمی کو یقینی بنائے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر