اپنی زندگی عوام کی خدمت کیلئے وقف کررکھی ہے ،محمد علی شاہ

اپنی زندگی عوام کی خدمت کیلئے وقف کررکھی ہے ،محمد علی شاہ

بٹ خیلہ(بیورورپورٹ) صوبائی اسمبلی میں پی پی کے پارلیمانی لیڈر سید محمد علی شاہ باچہ نے کہا ہے کہ مخالف سیاستدان صرف الیکشن کے وقت نمودار ہوتے ہیں جبکہ ہم نے زندگی عوام کے خدمت کے لئے وقف کردی ہے ۔ پی ٹی آئی کا ایم این اے جنید اکبر خان اپوزیشن ممبر ہونے کا بنا کر کارکنوں اور عوام کو دھوکہ دینا چاہتے ہیں حالانکہ میں بھی اپوزیشن ممبر ہوں جس کے باوجود بھی حلقے میں کروڑوں روپے کے ترقیاتی فنڈز خرچ کئے ہیں ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ملاکنڈ کے دورفتادہ پہاڑی علاقے سیلئے پٹے اور ٹوٹئی میں 25کروڑروپے سے زائد کے ترقیاتی کاموں کے باقاعدہ افتتاح کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کیا ۔اس موقع پر صوبائی اسمبلی میں پی پی پی کے پارلیمانی لیڈر سید محمد علی شاہ باچہ نے گورنمنٹ گرلز ہائیر سیکنڈری سکول ٹوٹئی کی سنگ بنیاد رکھ دی ۔ اس موقع پر تحصیل ناظم درگئی عبد الرشید بھٹو ، نائب ناظم حاجی ا عظم خان ،ناظم سیلئے پٹے حضرت اﷲ ، حاجی صبر صادق ، محمد یونس خان ،فضل حق ، سیف الرحمان ،خائستہ رحمان اور مسلم خان آف خانوڑی بھی موجود تھیں۔ ایم پی اے نے کہا کہ سکولوں کے آپ گریڈ یشن سمیت سڑکوں کی تعمیر اور پختگی پر کروڑوں روپے خرچ ہونگے ۔ اس موقع پر ایم پی اے نے 2کروڑ چالیس لاکھ روپے سے زائد کی لاگت سے تعمیر ہونیو الے گورنمنٹ گرلز ہائیر سیکنڈری سکول ٹوٹئی کا سنگ بنیاد رکھ دیا جبکہ دوکروڑ سے زائد لاگت سے ہائی سکول سے آپ گریڈ ہونے والے گورنمنٹ ہائیر سیکنڈری سکول ٹوٹئی ، 25لاکھ روپے سے ٹوٹئی کلے بلیک ٹاپنگ روڈ ، 51لاکھ روپے 86ہزار سے تعمیر ہونے والے ویٹرنری ہسپتال ، 2کروڑ 60لاکھ روپے سے زائد کی لاگت سے تعمیرو کشادہ ہونے والے ڈھائی کلو میٹر طویل ٹوٹئی تا سیلئے پٹے روڈ ، ایک کروڑ سے بنائے جانے والے ڈیڑھ کلو میٹر درہ روڈ ، 40لاکھ روپے سے کشادہ اور تعمیر ہونے والے بادامہ رڈ سمیت 44لاکھ روپے سے تعمیر ہونے والے گرلز پرائمری سکول سیلئے پٹے اور ایک کروڑ سے زائد کی لاگت سے تعمیر ہونے والے گورنمنٹ گرلز مڈل سکول کا افتتاح کیا ۔ اس موقع پر عوامی نشنل پارٹی ،پی ٹی آئی اور مسلم لیگ کے سرکردہ خاندانوں نے مستعفی ہو کر پی پی پی میں شمولیت کا اعلان کیا ۔ اجتماعات سے خطاب کرتے ہوئے ممبر صوبائی اسمبلی سید محمد علی شاہ باچہ کہ ہم نے زندگی عوا م کے خدمت کے لئے وقف کردی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ عوام جذباتی فیصلوں کی بجائے ہوش سے کام لیں تاکہ بعد میں انہیں اپنے فیصلوں پر پشیمانی نہ ہوں۔ انہوں نے کہا کہ نوجوانوں سے تبدیلی ، اسلام اور پختون کے نام پر ووٹ لیا گیا لیکن ووٹ لینے کے بعد نوجوانوں کی طرف کسی نے دیکھا بھی نہیں اس لئے نوجوان پی پی پی کے جھنڈے تلے متحد ہو کر حقوق کے لئے آواز اُٹھائیں

مزید : پشاورصفحہ آخر