ملک بھر کی سینکڑوں خواتین نے حنامنصب خان کی قیادت میں آل پاکستان ویمن فیڈریشن چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے قیام کا اعلان کردیا

ملک بھر کی سینکڑوں خواتین نے حنامنصب خان کی قیادت میں آل پاکستان ویمن ...
ملک بھر کی سینکڑوں خواتین نے حنامنصب خان کی قیادت میں آل پاکستان ویمن فیڈریشن چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے قیام کا اعلان کردیا

  

کراچی (آن لائن)ملک بھر کی سینکڑوں خواتین نے خاتون تاجررہنما حنامنصب خان کی قیادت میں آل پاکستان ویمن فیڈریشن چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے قیام کا اعلان کردیا،ویمن فیڈریشن کیلئے باقاعدہ وزارت تجارت اور ایس ای سی پی سے منظوری حاصل کی جائے گی جس کیلئے عملی طور پر کام کا آغاز کردیا گیا ہے۔ آل پاکستان ویمن فیڈریشن چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے حوالے سے کراچی میں ملک بھر سے آئی ہوئی 100سے زیادہ خواتین تاجروں کا اہم ترین اجلاس مقامی ہوٹل میںمنعقد ہوا،تمام ہی خواتین اس موقع پر مہمان خصوصی تھیں۔

اجلاس کی صدارت سارک ویمن چیمبر آف کامرس کی وائس چیئرپرسن اور اٹک ویمن چیمبر آف کامرس کی منتخب صدر حنا منصب خان نے کی۔اجلاس میں فریدہ قریشی،غزالہ سیفی،لالہ رخ،خالدہ مرزا خان،انیسہ یونس،یاسمین،لیلیٰ امین، یمنیٰ خان،ڈاکٹر فوزیہ حمید،عشرت فاروقی،شہلا احمد،یاسمین حسنین کے علاوہ کوئٹہ اور دیگر شہروں سے آئی ہوئی خواتین موجود تھیں۔اس موقع پر حنا منصب خان نے کہا کہ یہ پہلا قطرہ ہے اور ایک ایک قطرہ جمع ہوکر ایسی بارش برسے گی جس سے ہر طرف ہریالی چھا جائے گی،تجارتی شعبے میں خواتین کو جائز مقام ملے گا اور ہم بھارت کے بزنس مینوں کی نمائندہ تنظیم©"فیکی" اوربھارتی خواتین کی نمائندہ ایسوسی ایشن "فلو " (Flo)کی طرح اپنا جائز مقام حاصل کریں گے اورہم خواتین دنیا میں اپنی منفرد شناخت بھی بنائیں گی،پاکستان کی معاشی ترقی میں خواتین مثبت کردار ا دا کرسکتی ہیں۔انہوں نے بتایا کہ بھارت میں فیکی اور فلو ساتھ ساتھ ہیں مگر انکے اکاﺅنٹس اور سیکریٹری جنرل الگ الگ ہیں،پاکستان میں بھی خواتین تاجروں کو "فلو"طرز کی مضبوط فیڈریشن کی ضرورت ہے،پاکستان میں ٹیکسٹائل،گارمنٹس،ہینڈی کرافٹس اور دیگر شعبوں سے وابستہ انڈسٹری میں خواتین کیلئے وسیع مواقع موجود ہیں جن سے فائدہ اٹھانے کیلئے اقدامات کرنے ہونگے ۔

حنا منصب نے بتایا کہ آل پاکستان ویمن فیڈریشن چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری میں ون ویمن شو نہیں ہوگا بلکہ تمام فیصلے مشاورت سے ہونگے،ویمن فیڈریشن میں تمام شعبوں کیلئے باضابطہ کمیٹیاں قائم کی جائیں گی تاکہ خواتین تاجران کے مسائل اجاگر کرکے حل کرائے جاسکیں،ہماری کسی سے بھی مخالفت نہیں مگر ہم کسی کی بھی کوئی غلط بات تسلیم نہیں کریں گے اور نہ ہی کرنے دیں گے۔حنا منصب خان نے بتایا کہ مستقبل قریب میں کوئٹہ،نوشہرہ،چارسدہ،راولپنڈی،حیدرآباد سمیت دیگر شہروں میں ویمن چیمبرز آف کامرس قائم کرنے کی کوششوں کو تیز کیا جارہا ہے اور جلد ہی ہمیں اپنے مقاصدمیں کامیابی ملے گی۔انہوں نے بتایا کہ سارک ویمن چیمبر آف کامرس کی چیئرپرسن،رکن قومی اسمبلی شائستہ پرویز ملک اورسارک چیمبر آف کامرس کے نائب صدر افتخار علی ملک مسلسل خواتین تاجروں کو سپورٹ کررہے ہیں اور ہمیں اپنی تجاویز دیتے رہے ہیں اور انکا تعاون ہمیں آئندہ بھی حاصل رہے گا۔

انکا کہنا تھا ایف پی سی سی آئی میں برسراقتدارگروپ میںسچ کو سچ اور جھوٹ کو جھوٹ کہنے والوں کی کمی ہے ۔انہوں نے کہا کہ میں نے کبھی کسی چیمبر یا فیڈریشن سے ذاتی فوائد نہیں اٹھائے بلکہ اپنا زیادہ تر وقت خواتین تاجروں کو انکا حق دلانے میں دیا یہی وجہ ہے کہ آل پاکستان ویمن فیڈریشن چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے قیام کیلئے مجھے بے شمار خواتین کی سپورٹ ملی ہے۔

مزید : بزنس