’انٹرنیٹ پر یہ ایک شرمناک کام کرنے والوں کو کبھی سچا پیار نہیں ملتا‘ جدید تحقیق میں سائنسدانوں نے نوجوانوں کو خبردار کردیا

’انٹرنیٹ پر یہ ایک شرمناک کام کرنے والوں کو کبھی سچا پیار نہیں ملتا‘ جدید ...
’انٹرنیٹ پر یہ ایک شرمناک کام کرنے والوں کو کبھی سچا پیار نہیں ملتا‘ جدید تحقیق میں سائنسدانوں نے نوجوانوں کو خبردار کردیا

  

لندن (نیوز ڈیسک)انٹرنیٹ پر دوستی اور محبت کی تلاش میں سرگرداں نوجوان صنف مخالف کی توجہ حاصل کرنے کے لئے کچھ ایسی حرکتیں بھی کر بیٹھتے ہیں کہ جن کی وجہ سے انہیں پیار کی بجائے پھٹکار ملتی ہے اور ان کے دکھوں اور مایوسی میں مزید اضافہ ہو جاتا ہے۔

سائنسدانوں نے ایک حالیہ تحقیق میں ا نکشاف کیا ہے کہ سوشل میڈیا پر صنف مخالف کو اپنا برہنہ جسم دکھا کر متاثر کرنے کی کوشش کرنے والوں کو ہمیشہ ناکامی کا منہ دیکھنا پڑتا ہے کیونکہ جسمانی خوبصورتی کی نمائش کرنے والوں کی بجائے دلچسپ گفتگو کی صلاحیت رکھنے والوں کو کہیں زیادہ پسند کیا جاتا ہے۔

’خواتین کو شریف اور نرم مزاج مرد پسند نہیں آتے کیونکہ۔۔۔‘ جدید تحقیق میں سائنسدانوں نے ایسا حیران کن انکشاف کردیا کہ جان کر ہر مرد کا منہ کھلا کا کھلا رہ جائے

اخبار ڈیلی سٹار کی رپورٹ کے مطابق یہ تحقیق لیڈز بیکٹ یونیورسٹی کے سائنسدانوں نے فیس بک اور دیگر سوشل میڈیا ویب سائٹیں استعمال کرنے والے 25 سے 59 سال عمر کے افراد پر کی ہے۔ تحقیق کے بارے میں بات کرتے ہوئے ڈاکٹر کرسٹینا مگیل کا کہنا تھا کہ خواتین جسمانی نمائش پر سنجیدہ اور ذہانت سے بھرپور گفتگو کو ترجیح دیتی ہیں، جبکہ مرد بھی ایسی خواتین کی جانب زیادہ مائل ہوتے ہیں کہ جو باوقار نظر آتی ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ دوستی کی تمنا میں بے تاب لڑکیاں جب اپنی ہیجان انگیز تصاویر انٹرنیٹ پر پوسٹ کرتی ہیں تو مرد ان سے لطف اندوز ہونے کے لئے انہیں دیکھتے ضرور ہیں لیکن ایسی لڑکیوں کو سستی تفریح سے زیادہ کچھ نہیں سمجھتے اور ان کے ساتھ سنجیدہ تعلق پر کبھی مائل نہیں ہوتے۔ وہ ایسی لڑکیوں کو تعلیم یافتہ اور باعزت بھی نہیں سمجھتے۔

تحقیق کے دوران ایک نوجوان نے یہ انکشاف بھی کیا کہ جب اس نے اپنی منگیتر کی 19 سالہ بہن کی انٹرنیٹ پر ایک ایسی تصویر دیکھی جس میں وہ انتہائی مختصر لباس میں نظر آرہی تھی تو اپنی منگیتر کو میسج کرکے کہا کہ اس کی بہن کسی فاحشہ خاتون جیسی نظر آرہی تھی۔ اسی طرح ایک اور نوجوان نے بتایا کہ جب وہ کسی لڑکی کی غیر مناسب لباس میں تصویر دیکھتا ہے تو اس کے دل میں خیال پیدا ہوتا ہے کہ بکاﺅ مال نظر آنے والی لڑکی اس کے شایان شان نہیں ہے۔ اسی طرح اکثر لڑکیوں کا کہنا تھا کہ وہ ان نوجوانوں کو توجہ دیتی ہیں جو اچھی گفتگو کرسکتے ہیں، دیکھنے میں باوقار نظر آتے ہیں اور اپنے جسم کی نمائش نہیں کرتے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس