5لاکھ سعودی ریال سالانہ بھیجنے کی شرط نے عمرہ صنعت کو ہلا کر رکھ دیا

  5لاکھ سعودی ریال سالانہ بھیجنے کی شرط نے عمرہ صنعت کو ہلا کر رکھ دیا

لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)عمرہ سیزن مزید تاخیر کا شکارہونے کا خدشہ بڑھ گیا،سٹیٹ بنک کی طرف سے 5لاکھ سعودی ریال سالانہ بھیجنے کی شرط نے عمرہ کی پوری صنعت کو ہلا کر رکھ دیا،ملک بھر میں لاکھوں کی تعداد میں عمرہ کروانے والی کمپنیوں کے مالکان بھی سر پکڑ کر بیٹھ گئے،سعودی حکومت نے عمرہ اپروول سے ٹرانسپورٹ تک اور مکہ،مدینہ ہوٹلز کی ادائیگی آن لائن اور آئی بین کے ذریعے کرنے کی شرط عائد کر رکھی ہے،نئی پالیسی کے مطابق لاکھوں ریال روزانہ کی بنیاد پر آئی بین کے ذریعے ٹرانسفر ہوں گے،چند کمپنیوں کے اکاؤنٹس ابھی تک کھل سکے ہیں،ٹرانزیکشن شروع نہیں ہو سکی جس کی وجہ سے عمرہ اپروول مزید تاخیر کا شکار ہو جائے گی،ذرائع کا کہنا ہے کہ محرم میں عمرہ سیزن کا آغاز ہوتا نظر نہیں آ رہا،مکہ،مدینہ میں ہوٹلز ایڈوانس بک کروانے والوں سمیت ائیر لائنز کے ٹکٹ ایڈوانس خریدنے والوں کو بھی شدید مشکلات کا سامنا ہے۔

نئی پالیسی

مزید : صفحہ آخر


loading...