محکمہ پبلک ہیلتھ عمر کوٹ میں مبینہ طور پر کروڑوں روپے کی ہیرا پھیری، اینٹی کرپشن کا چھاپہ

محکمہ پبلک ہیلتھ عمر کوٹ میں مبینہ طور پر کروڑوں روپے کی ہیرا پھیری، اینٹی ...
محکمہ پبلک ہیلتھ عمر کوٹ میں مبینہ طور پر کروڑوں روپے کی ہیرا پھیری، اینٹی کرپشن کا چھاپہ

  


عمرکوٹ ( سید ریحان شبیر  ) حکومت سندھ کے محکمہ پبلک ہیلتھ عمرکوٹ میں مبینہ طور پر کروڑوں روپے کی ہیرا پھیری کے انکشاف کےبعد محکمہ اینٹی کرپشن کا چھاپہ اینٹی کرپشن نے پبلک ہیلتھ کا ریکارڈ ضبط کرلیا تحقیقات شروع تحقیقات کی روشنی میں مبینہ کرپشن میں ملوث اہلکاروں کےخلاف مقدمہ درج کیا جائے گا ۔

سرکل آفسیر منصور پنھور کی میڈیا سے بات چیت تفصیلات کےمطابق آج محکمہ اینٹی کرپشن عمرکوٹ کے سرکل آفسیر منصور پنھور کی قیادت میں اینٹی کرپشن کے اہلکاروں نے کارروائی کرتے ہوئے پبلک ہیلتھ ریکارڈ اپنے قبضے میں لےلیا اس موقع پر میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے اینٹی کرپشن عمرکوٹ کے سرکل آفسیر منصور پنھور نے کہا کہ محکمہ پبلک ہیلتھ عمرکوٹ میں سولہ"16"کروڑ   روپے کی ہیرا پھیری کی اطلاعات ہے۔

"نمائندہ ڈیلی پاکستان آن لائن "کے ذرائع مطابق حکومت سندھ نے محکمہ پبلک ہیلتھ عمرکوٹ کو مختلف اسکیموں کےلیے سولہ "16"سولہ کروڑ روپے جاری کیے تھے ذرائع مطابق کروڑوں روپے کی رقم اسکیموں پر لگنے کے بجائے مبینہ طور پر گاڑیوں کی خرید و فروخت اور مختلف بلوں کی مد میں خرچ کردیے گئے ان اطلاعات کےبعد آج محکمہ پبلک ہیلتھ عمرکوٹ میں اینٹی کرپشن نےکاروائی کرکے ریکارڈ ضبط کرلیا ہے اور تحقیقات شروع کردی گی ہے جس کے کئی اہم انکشافات سامنے آنے کی توقع ہے یہ امر قابل ذکر ہےکہ عمرکوٹ ضروری کے مختلف تعلقوں گاؤں گوٹھوں میں محکمہ پبلک ہیلتھ عمرکوٹ نے لوگوں کو پانی کی فراہمی کےلیے کئی  اسکیمیں شروع کی گئی مگر کئی کئی سال گذرنے کے باوجود بھی یہ اسکیمیں مکمل نہ ہوسکی .

مزید : علاقائی /سندھ /عمرکوٹ


loading...