پاکستان مسلم لیگ ن متحدہ عرب امارات کے صدر چوہدری محمد الطاف کا استعفیٰ اور نامنظوری

پاکستان مسلم لیگ ن متحدہ عرب امارات کے صدر چوہدری محمد الطاف کا استعفیٰ اور ...
پاکستان مسلم لیگ ن متحدہ عرب امارات کے صدر چوہدری محمد الطاف کا استعفیٰ اور نامنظوری

  


دبئی (طاہر منیر طاہر) پاکستان مسلم لیگ ن یو اے ای کے صدر چودھری محمد الطاف نے اپنی ذاتی مصروفیات کی وجہ سے پی ایم ایل این کی صدارت سے استعفیٰ دینے کی خواہش کا اظہار کیا ہے۔ انہوں نے ایک خط کے ذریعے قائد محمد نواز شریف، اسحق ڈار اور پی ایم ایل این انٹرنیشنل افیئرز کے جنرل سیکرٹری و صدر پی ایم ایل این گلف ریجن چودھری نور الحسن تنویر سے کہا ہے کہ بعض ذاتی مصروفیات کی وجہ سے وہ موجودہ عہدہ سے استعفیٰ دے رہے ہیں جو قبول کیا جائے۔ استعفیٰ ملنے پر چودھری محمد الطاف اور چودھری نور الحسن کی ٹیلی فون پر تفصیلی بات چیت ہو ئی جس میں چودھری نور الحسن تنویر نے کہا کہ موجودہ حالات استعفیٰ کے لئے موزوں نہیں ہیں۔ پارٹی پر کٹھن وقت ہے اور پی ایم ایل این کی اعلیٰ قیادت اور قائد محترم محمد نواز شریف جیل میں ہیں۔ ان حالات میں استعفیٰ قبول نہیں کیا جاسکتا۔ اس پر چودھری محمد الطاف نے اپنا استعفیٰ کا فیصلہ واپس لے لیا۔ لہٰذا اب وہ بدستور پی ایم ایل این یو اے ای کے صدر رہیں گے۔ چودھری محمد الطاف کے استعفیٰ پر بات کرتے ہوئے چودھری نور الحسن تنویر نے کہا کہ امارات میں کچھ لیگی کارکنوں نے پارٹی اتحاد میں پھوٹ ڈالنے کی ناکام کوشش کی ہے اور چودھری محمد الطاف کو استعفیٰ پر مجبور کیا ہے۔ چودھری نور الحسن تنویر نے کہا کہ چودھری محمد الطاف پارٹی کا سرمایہ ہیں لہٰذا ہمیں اس جیسے بے لوث لیڈران کی رہنمائی کی ضرورت ہے اور جو لوگ پارٹی میں پھوٹ ڈالنے کی کوشش کررہے ہیں انہیں چاہیے کہ وہ اپنی حرکتوں سے باز رہیں اور پی ایم ایل این یو اے ای میں اتحاد و اتفاق قائم رکھیں۔ چودھری نور الحسن تنویر نے کہا کہ وہ مستقبل قریب میں خود یو اے ای آرہے ہیں لہٰذا ان کے آنے تک چودھری الطاف بطور صدر اور چودھری عبدالغفار بطور نائب صدر کام کرتے رہیں گے۔ دیگر لیگی کارکنوں کو بھی چاہیے کہ وہ ان کے ساتھ تعاون کریں اور مل جل کر چلیں۔ چودھری نور الحسن تنویر نے کہا کہ پی ایم ایل این کا ہر کارکن ہمارا قیمتی سرمایہ اور اثاثہ ہے۔ ہر کارکن کی حیثیت اور عزت ہمارے دلوں میں ہے۔ تمام کارکنان کو چاہیے کہ وہ پارٹی کے اس کڑے وقت میں پارٹی میں پھوٹ ڈالنے اور اسے کمزور کرنے کی بجائے ایک پلیٹ فارم پر جمع ہوکر پی ایم ایل این کی مضبوطی اور اتحاد کے لئے کام کریں۔

مزید : عرب دنیا


loading...