ڈومیسٹک سیزن،پی سی بی نے نوجوان کرکٹرز کیلئے روڈمیپ واضح کردیا

ڈومیسٹک سیزن،پی سی بی نے نوجوان کرکٹرز کیلئے روڈمیپ واضح کردیا
ڈومیسٹک سیزن،پی سی بی نے نوجوان کرکٹرز کیلئے روڈمیپ واضح کردیا

  


لاہور(آئی این پی)پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی)نے ڈومیسٹک سیزن2019-20 میں نوجوان کرکٹرز کیلئے روڈمیپ واضح کردیا،نوجوان کھلاڑی سکول، ہائی پرفارمنس اور مختلف ایج گروپس میں کارکردگی کا مظاہرہ کرکے اعلی سطحی کرکٹ میں جگہ بناسکیں گے،ایک روزہ اور تین روزہ قومی انڈر 19کرکٹ کے مقابلے یکم اکتوبر سے6ٹیموں کے درمیان شروع ہوں گے،انڈر 13اور انڈر 16کھلاڑیوں کے لیے ٹرائلز کا آغاز 12ستمبر سے ہوگا۔

پاکستان کرکٹ بورڈ کو یقین ہے کہ آئندہ ڈومیسٹک سیزن نوجوان کھلاڑیوں کے لیے اعلی سطحی کرکٹ میں آنے کا واضح روڈمیپ ہے۔90سٹی کرکٹ ایسوسی ایشنز کی زیرنگرانی کلب کرکٹ کے ساتھ ساتھ سکول اورمختلف ایج گروپ کے مقابلے ہوں گے۔ ہر سٹی کرکٹ ایسوسی ایشن اپنے دائرہ اختیار میں رہتے ہوئے مقابلوں کا انعقاد کرے گی ۔ اس کے قطع نظر کہ ایک کھلاڑی سکول کرکٹ سے اپنے سفر کا آغاز کررہا ہے یا پی سی بی سے منظور شدہ کسی کرکٹ کلب سے مقابلوں کے انعقاد سے نوجوان کھلاڑیوں کو اعلی سطحی کرکٹ میں آنے کے مواقع میسر آئیں گے۔نئے ڈومیسٹک کرکٹ سٹرکچر کے تحت سٹی کرکٹ ایسوسی ایشن کو متواتر سکول کرکٹ کے مقابلوں کا انعقاد کرنا ہوگا جس سے نئے ٹیلنٹ کی تلاش میں مدد ملے گی۔ کلب اور سٹی کرکٹ ٹیموں کے ٹیلنٹ ہنٹ پروگرام سمیت نوجوان کھلاڑیوں کو ٹیلنٹ دیکھانے کے لیے دیگر راستے بھی میسر ہوں گے۔تمام کرکٹ ایسوسی ایشنز کو سالانہ انٹر سٹی کرکٹ ٹورنامنٹ کا انعقاد کرنا ہوگا۔ انٹر سٹی کرکٹ ٹورنامنٹ کی 6فاتح ٹیمیں نیشنل سٹی چیمپئن شپ میں مدمقابل آئیں گی۔

علاوہ ازیں ہر ایسوسی ایشن ایک روزہ اور تین روزہ مقابلوں کے لیے اپنی اپنی انڈر 19کرکٹ ٹیموں کا انتخاب کرے گی۔تمام کرکٹ ایسوسی ایشنز کوسٹی کرکٹ ایسوسی ایشنز کے تعاون سے انڈر 13اور انڈر 16ٹیموں کے انتخاب کے لیے ٹرائلز کا انعقاد کرنا ہوگا۔پاکستان کرکٹ بورڈ انڈر 13اور انڈر 16کھلاڑیوں کے لیے ٹرائلز 12ستمبر سے شروع کررہا ہے۔ انڈر 13کیچ ام ینگ اور انڈر 16پی سی بی پیپسی کرکٹ اسٹارز پروگرام کے تحت ٹرائل 20ستمبر تک جاری رہیں گے۔ٹرائلز کا انعقاد نئے ڈومیسٹک کرکٹ اسٹرکچر کے تحت ملک بھر کے 82 شہروں میں کیا جائے گا۔ٹرائلز کی نگرانی پی سی بی ڈومیسٹک کرکٹ ڈیپارٹمنٹ اور مقامی کوچز کریں گے۔ٹرائلز میں بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے کھلاڑیوں کو 6 ہائی پرفارمنس سنٹر زمیں تربیت دی جائے گی۔

سٹیٹ آف دی آرٹ سہولیات سے آراستہ تمام ہائی پرفارمنس سنٹرز میں نوجوان کھلاڑیوں کو بین الاقوامی معیار کے مطابق تربیت دی جائے گی۔گذشتہ ڈومیسٹک کرکٹ سیزن میں قومی فرسٹ کلاس کرکٹر کی اوسط عمر 27.7تھی جو ٹیسٹ کرکٹ کھیلنے والی بہترین ٹیموں میں دوسرے نمبر پر ہے۔ یہ آئی سی سی کرکٹ ورلڈکپ 2019 میں شریک قومی کرکٹ اسکواڈ کی اوسط عمر سے بھی زیادہ ہے۔ چیئرمین پی سی بی احسان مانی کا کہناہے کہ زیادہ سے زیادہ نوجوانوں کو کرکٹ کی طرف راغب کرنا میرا ویژن ہے۔چیئرمین پی سی بی نے کہا کہ کھیل نوجوانوں کی ترقی میں اہم کردار ادا کرتے ہیں۔نئے ڈومیسٹک اسٹرکچر کے تحت ہم کرکٹ کو نوجوانوں کے لیے ایک سنجیدہ کیریئر بنانا چاہتے ہیں۔احسان مانی کا کہنا ہے کہ ہم کرکٹ کو ہر کسی کی دہلیز تک لے جانا چاہتے ہیں۔ پرامید ہیں کہ اس نئے ڈومیسٹک اسٹرکچر سے ہمیں اس کے حصول میں کامیابی ملے گی تاہم اسے طویل عرصے تک پائیدار رکھنے کے لیے کچھ وقت درکار ہوگا۔قومی ایک روزہ اور تین روزہ انڈر  19کرکٹ مقابلے یکم اکتوبر سے 21نومبر تک جاری رہیں گے۔

مزید : کھیل


loading...