فوڈ اتھارٹی ٹیموں کی  کارروائیاں‘21یونٹس سیل

    فوڈ اتھارٹی ٹیموں کی  کارروائیاں‘21یونٹس سیل

  

ملتان (سٹاف رپورٹر)پنجاب فوڈ اتھارٹی ناقص خوراک فروخت کرنیوالوں کیخلاف متحرک، فیٹ رینڈرنگ یونٹ،(بقیہ نمبر13صفحہ 5پر)

سوئیٹس اینڈ بیکرز،کریانہ سٹورز سمیت21فوڈیونٹس سربمہر،  1ہزار لیٹر کوکنگ آئل، 600کلو چربی کیتھیلے، 500کلو کھلا آئل، 460ساشے گٹکا، 180ٹوٹے انڈے برآمد، ملک شاپس سمیت دودھ بردارگاڑیوں کی چیکنگ، 1690لیٹر دودھ تلف،حفظان صحت کے اصولوں کی خلاف ورزی پر28 فوڈپوائنٹس کو251,500 روپے کے جرمانے عائد،240شاپس مالکان کو اصلاحی نوٹسز جاری کردئیے۔ تفصیلات کے مطابق فوڈ سیفٹی ٹیمز نے کارروائیاں کرتے ہوئے ملتان میں راشد فیٹ رینڈرنگ یونٹ کو ناقابل سراغ،کھلا آئل پائے جانے پر،عبداللہ ٹی سٹوراینڈ مصری یونٹ کو خوراک کی تیاری میں نیل کا استعمال کرنے اور الحسین پولٹری شاپ کو کم وزن،بیمار مرغیوں کا گوشت فروخت کرنے پر سیل کیاگیا۔اس کے علاوہ خانیوال میں ہمدرد بیکرز کو بیکری مصنوعات کی تیاری میں ٹوٹے،خراب انڈوں کا استعمال کرنے،قمر ٹک شاپ کو گٹکا فروخت کرنے اوروہاڑی میں زین سوڈاواٹراور بہاولنگر میں اجمل سوڈا واٹر کومصنوعی مٹھاس کا استعمال کرنے پر سیل کیاگیا۔ بہاولپورمیں شاہ جی سوئیٹس،رحیم یارخان میں حسنین سوئیٹس اینڈ بیکرزاورمظفرگڑھ میں النور بیکرز کو بیکری مصنوعات کی تیاری میں ناقابل سراغ کیمیکل،ایکسپائرڈ فلیورز کا استعمال کرنے پر سربمہر کیاگیا۔مظفرگڑھ میں قیصرایوب کریانہ سٹور، بسم اللہ کریانہ سٹور، لیہ میں احسن اشرف کریانہ،نیومکہ سپر سٹور،راجن پور میں ناصر کریانہ سٹور کو دی گئی ہدایات پر عمل نہ کرنے،ملاوٹی سرخ مرچیں فروخت کرنے،لائسنس فیس کی عدم ادائیگی پر کریانہ سٹورز کو سیل کیاگیا۔ڈی جی خان میں القادر ملک شاپ کو ملاوٹی دودھ فروخت کرنے،راجن پور میں الشیریں جوس کارنر کو سٹور میں گندا پانی کھڑا ہونے پر سیل کیاگیا۔مزید کاروائی کے دوران راجن پورمیں کوئٹہ بلوچستان ہوٹل کو کھلے مصالحہ جات کا استعمال کرنے پر سربمہر کردیاگیا۔اس کے علاوہ رحیم یار خان میں ملک سیفٹی ٹیموں کی طرف سے اقبال آباد موڑ پر ناکہ بندی کی گئی۔  16دودھ بردارگاڑیوں میں موجود 2450لیٹردودھ کی چیکنگ کی گئی۔07گاڑیوں کے دودھ کے ٹیسٹ فیل ہونے پر 1440لیٹر ملاوٹی دودھ تلف کردیاگیا۔دودھ میں پانی اورمضر یوریا کی ملاوٹ پائی گئی۔ 

سیل

مزید :

ملتان صفحہ آخر -