واپڈا ٹاؤن سکینڈل: 3 ملزموں کا 12 روزہ جسمانی ریمانڈ منظور 

واپڈا ٹاؤن سکینڈل: 3 ملزموں کا 12 روزہ جسمانی ریمانڈ منظور 

  

 ملتان (خصو صی رپورٹر)  احتساب عدالت ملتان نے واپڈا ٹاؤن سیکنڈل میں کروڑوں روپے مالیت کے کی سٹیمپ پیپرز فیس غبن کرنے والے پٹورایوں محمد ابرہیم اور فخر (بقیہ نمبر24صفحہ 5پر)

بلوچ اور پراپرٹی محل کے مالک شفیق سمیت تینوں ملزمان کا  12روزہ جسما نی ریمانڈ منظور کر تے ہو ئے 17ستمبر کو  دو با رہ  پیش کر نے کا حکم د یا ہے واپڈا ایمپلائز کوآپریٹیو ہاؤسنگ سوسائٹی کی انتظامیہ نے مختلف اوقات میں معلطل ایڈمن آفیسر نعیم ارشد کے ذریعے اپنے پٹورایوں محمد ابرہیم اور فخر عباس کو واپڈا ٹاؤن فیز تھری کے نام اراضی ٹرانسفر کرنے کے لیے بیس کروڑ روپے سے زائد کی رقم جاری کی یہ رقم اسٹیمپ ڈیوٹی کارپوریٹس فیس اور دیگر سرکاری واجبات کی ادائیگی پر خرچ ہونی تھی لیکن ان پٹورایوں نے صرف پانچ کروڑ روپے سرکاری فیس کی ادائیگی پر خرچ کئے لیکن باقی رقم دبا نیب کی جانب سے واپڈا ٹاؤن سیکنڈل میں گرفتاریاں شروع ہونے کے بعد اراضی منتقلی کے کا سلسلہ رک گیا تو ان پٹورایوں نے پندرہ کروڑ روپے مالیت سے زائد کی رقم دبا لی اس دوران نہ تو ایڈمن آفیسر نعیم ارشد نے ان پٹورایوں سے باقی رقم واپس لینے کی تگ و دو کی اور نہ سابقہ انتظامیہ نے آن پٹواریوں کو پوچھنا گوارا کیا نیب کی جانب سے تفتیش مکمل ہونے کے بعد گزشتہ روز ان پٹورایوں کو ایڈمن آفیسر نعیم ارشد سمیت نیب آفس بہادر پور بلایا گیا جہاں ان دونوں پٹورایوں کو گرفتار کر لیا گیا جبکہ اسی دوران ایک پراپرٹی ڈیلر محمد شفیق کو بھی نیب آفس میں گرفتار کر لیا گیا محمد شفیق پراپرٹی محل کے نام سے کاروبار کرتے ہے مذکورہ ملزم پر واپڈا ٹاؤن کو اڑھائی سو کنال اراضی منتقل نہ کرنے کا الزام ہے۔

منظور

مزید :

ملتان صفحہ آخر -