جنوی اضلاع کے گیس کا کوہاٹ پیداوار زون ہے،جنوبی اضلاع حقدار ہیں:ساجد اسلام

  جنوی اضلاع کے گیس کا کوہاٹ پیداوار زون ہے،جنوبی اضلاع حقدار ہیں:ساجد اسلام

  

 ہنگو (بیورورپورٹ)جنوبی اضلاع کے گیس کا کوہاٹ پیداواری زون ہے اس لئے پیداواری اضلاع کو ترجیحی بنیادوں پر گیس فراہم کیا جائے مگر سوئی نادرن گیس پائپ لائن کی بدمعاشی سے ایس این جی پی ایل اپنی من مانی کرتا ہے ان اضلاع میں گیس کی کمی کو برقرار رکھا گیا ہے جو کہ ہائی کورٹ کے فیصلے کی کھلم کھلا خلاف ورزی ہے ان خیالات کا اظہار سی این جی ایسوسی ایشن سدرن زون کے پیٹرن انچیف اور کوہاٹ چیمبر آف کامرس کے ایگزیکٹیو ممبر حاجی ساجد اسلام کی سربراہی میں منعقدہ اجلاس سے سدرن زون کوہاٹ ہنگو کرک اور بنوں کے ایگزیکٹیو ممبران اور عہدیداران نے خطاب کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ جنوبی اضلاع میں پریشر کی کمی اور لوڈ شیڈنگ بجلی کی ناروا لوڈ شیڈنگ اور سڑکوں کی بدحالی ایک اہم مسئلہ ہے انہوں نے کہا کہ جنوبی اضلاع کے گیس کا کوہاٹ پیداواری زون ہے اور آئین پاکستان کی شق 158کے تحت اور پشاور ہائی کورٹ کے تین ججمنٹ2012/2015/2017میں صاف فیصلہ ہے کہ پیداواری اضلاع کو ترجیحی بنیادوں پر گیس کی فراہمی یقینی ہونی چاہئے لیکن سوئی نادرن گیس پائپ لائن کی بدمعاشی نے آئین اور پشاور ہائی کورٹ کے فیصلے کو ردی کی ٹھوکری میں ڈال کر اپنے آپ کو عدالت سے طاقتور سمجھتا ہے اس کی پشت پناہی کی وجہ سے ایس این جی پی ایل اپنی من مانی کرتے ہوئے پیداواری اضلاع کو کم گیس فراہم کر رہا ہے حالانکہ ہماری زون کے گیس کا پیداوار ضرورت سے ذیادہ ہے اس کے باوجود ہم کو ضرورت کا گیس بھی فراہم نہیں کیا جاتا جو کہ آئین پاکستان کی خلاف ورزی اور پشاور ہائی کورٹ کے فیصلے کو چیلنج کرنے کے مترادف ہے انہوں نے حکام بالا اور متعلقہ ذمہ داران سے اپیل کی ہے کہ ہمیں اس قدرتی نعمت سے محروم نہ کیا جائے کیونکہ ہم مایوسی کی دلدل میں گر گئے ہیں ہم پر رحم کرکے ہم کو اس دلدل سے نکالا جائے 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -