نام نہاد انتخابات مسئلہ کشمیر کا حل نہیں، پروفیسر عبدالغنی بٹ

نام نہاد انتخابات مسئلہ کشمیر کا حل نہیں، پروفیسر عبدالغنی بٹ

سرینگر(اے پی پی) کل جماعتی حریت کانفرنس کے سینئر رہنما پروفیسر عبدالغنی بٹ نے کہا ہے کہ مقبوضہ علاقہ میں کرائے جانے والے نام نہاد انتخابات مسئلہ کشمیرکا حل نہیں اور انہیں محض انتظامی معاملات چلانے کے تناظر میں لیا جانا چاہیے۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق پروفیسر بٹ نے سرینگر میں ایک میڈیا انٹرویو میں کہا کہ کشمیریوں کی خواہشات کو نظر انداز کرکے مسئلہ کشمیر حل نہیں کیا جاسکتا۔ انہوںنے کہا کہ بھارت نواز رہنماﺅں نے سڑک، پانی اور بجلی کے نام پر لوگوں کو ہمیشہ بیوقوف بنایا ہے۔ پروفیسر بٹ کا کہنا تھا کہ نیشنل کانفرنس، پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی اور دیگر بھارت نواز جماعتیں اپنے فائدے کےلئے کشمیریوں کا ہمیشہ خون چوستی رہی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ حریت رہنماﺅں کی نئی دہلی میں پاکستان کے ہائی کمشنر عبدالباسط کے ساتھ ملاقات انتہائی مفید اور حوصلہ افزا رہی ہے۔ پروفیسر بٹ نے کہا کہ وہ عبدالباسط کی تقریر سے انتہائی متاثر ہوئے جس میں انہوں نے یقین دلا یا کہ پاکستان کشمیریوں کے مفادات کو محفوظ بنانے کےلئے بھارت میں بننے والی نئی حکومت کے ساتھ تمام اقدامات اٹھائے گی۔انہوں نے کہا کہ مسئلہ کشمیر کو حل کرنے کا واحد راستہ مذاکرات ہی ہیں اور کل جماعتی حریت کانفرنس بھارت کی کسی بھی سیاسی جماعت کے ساتھ بات چیت کےلئے تیار ہے جو تنازعہ کشمیر کو حل کرنے میں مخلص ہو۔

مزید : عالمی منظر