بہتر نتائج کیلئے قومی ٹیم میں نئے کھلاڑیوں کو جگہ دی جائے ، اقبال قاسم

بہتر نتائج کیلئے قومی ٹیم میں نئے کھلاڑیوں کو جگہ دی جائے ، اقبال قاسم

کراچی ( آن لائن ) پی سی بی گورننگ بورڈ کے رکن اور سابق چیف سلیکٹر اقبال قاسم نے کہا ہے کہ مستقبل میں بہترنتائج کیلیے قومی ٹیم میں نئے کھلاڑیوں کو جگہ دی جائے جبکہ مستقل شامل رہنے کے باوجود کارکردگی نہ دکھانے والے سینئرز اپنے حوالے سے خود ہی فیصلہ کرلیں۔مختصر فارمیٹ کی کرکٹ میں قومی قیادت شاہد آفریدی کوسونپ دی جائے، بورڈ جلدبازی کے بجائے تحمل سے کام لے، راشد لطیف کے ہاتھ مضبوط کرنے کی ضرورت ہے، کراچی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ آئی سی سی ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کے بعدکپتان محمد حفیظ کے مستعفی ہونے کا فیصلہ درست ہے،اب مزید کسی بحث میں پڑنے کے بجائے نئی قیادت کے حوالے سے سوچا جائے، شاہد آفریدی باہمت اور تجربہ کار ہونے کے ناطے اس ذمہ داری کو بخوبی نبھانے کی اہلیت اور صلاحیت رکھتے ہیں، البتہ مستقبل میں نئے کپتان کے لیے احمد شہزاد جیسے نوجوان کھلاڑیوں کو ابھی سے گروم کیا چاہیے۔اقبال قاسم نے کہا کہ قومی کرکٹ ٹیم میں اب تبدیلیاں نا گزیر ہوچکیں، موجودہ صورتحال میں صبروتحمل کا مظاہرہ کرنے کی ضرورت ہے، اس ضمن میں پی سی بی کو مناسب منصوبہ بندی سے اپنا کردار بخوبی احسن طریقہ سے انجام دینا ہوگا، انھوں نے کہا کہ نئے چیف سلیکٹر راشد لطیف کی صلاحیتوں سے انکارنہیں، فرائض کی ادائیگی میں انھیں بھرپور سپورٹ کیا جائے، راشد کی ذمہ داری ہے کہ وہ نئے کپتان کے ساتھ مل کر آئندہ کیلیے مربوط لائحہ عمل تیار کریں۔

، قومی ٹیم کا متواتر حصہ رہنے کے باوجود کچھ نہ کرنے والوں کو اب چلے جانا چاہیے، ملک میں انٹرنیشنل کرکٹ نہ ہونے کے باعث باصلاحیت کھلاڑیوں کا فقدان ہے، دستیاب ٹیلنٹ کو ضائع کرنے کے بجائے مواقع فراہم کیے جائیں، ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کے فائنل کے حوالے سے اقبال قاسم نے کہا کہ مضبوط بیٹنگ کی بدولت بھارتی کامیابی کا امکان روشن ہے،کنڈیشنز سے فائدہ اٹھانے والی ٹیم ہی سرخرو ہوگی، ٹاس بھی اہم کردار کرے گا۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی