افغان صدارتی الیکشن میں تاریخی ٹرن آؤٹ قابل ستائش ہے، عالمی برادری

افغان صدارتی الیکشن میں تاریخی ٹرن آؤٹ قابل ستائش ہے، عالمی برادری

 کابل/واشنگٹن/لندن(اے این این) اقوام متحدہ اور امریکہ سمیت عالمی برادری نے افغان صدارتی الیکشن میں عوام کی دلچسپی کو سراہتے ہوئے کہا ہے کہ جمہوری استحکام کے لئے بھرپور تعاون جاری رہے گا،تشدد کے خطرے کے باوجود لوگوں کا ووٹ کے لئے گھروں سے باہر نکلنا تاریخی موقع اور جمہوریت کے سا تھ لگن کا اظہار ہے ،ثابت ہو گیا افغان عوام اپنے مستقبل کا فیصلہ خود کرنا چاہتے ہیں جبکہ افغان صدر حامد کرزئی نے کہا ہے کہ صدارتی الیکشن میں عوام کی بھرپور شمولیت سے ملک کے وقار میں اضافہ ہوا ہے۔افغانستان کے صدارتی الیکشن میں تاریخی ٹرن آؤٹ پر بین الاقوامی برادری کا مثبت رد عمل سامنے آیا ہے۔وائٹ ہاوس سے جاری بیان کے مطابق امریکی صدر باراک اوبامہ نے کہا ہے کہ ہم افغان عوام، سکیورٹی فورسز، اور الیکشن حکام کو خراجِ تحسین پیش کرتے ہیں۔یہ انتخابات افغانستان کے جمہوری مستقبل کے تحفظ اور بین القوامی حمایت جاری رکھنے کے لیے ضروری تھے، براک اوباما نے افغان عوام کو \"تاریخی \"انتخابات میں ووٹ ڈالنے پر مبارکباد پیش کی۔ انھوں نے اس موقع پر ان امریکی شہریوں کو بھی خراج عقیدت پیش کیا جنہیں نے ان انتخابات کو ممکن بنانے کے لیے \"بے شمار قربانیاں\" دیں۔۔برطانیہ کے وزیرِ خارجہ ولیم ہیگ نے ایک بیان میں کہا یہ افغان عوام کی ایک عظیم کامیابی ہے کہ تشدد کے خطرے کے باوجود بچے بوڑھے، جوان، مرو اور خواتین اتنی بڑی تعداد میں نکلے اور ملک کے مستقبل کے لیے اپنی رائے کا اظہار کیا،دھمکیوں اور شدید بارش کی پرواہ نہ کرتے ہوئے دارالحکومت کابل میں لوگوں نے بڑی تعداد میں انتخابی عمل میں حصہ لیا اور اپنا حق رائے دہی استعمال کیا۔نیٹو کے فوجی اتحاد آنیرس فو گ راس موسن نے افغانستان کے انتخابات کو تاریخی موقع قرار دیا۔انھوں نے کہا کہ میں لاکھوں افغان مرد و خواتین کو مبارکباد پیش کرتا ہوں،جنھوں نے اس قدر پرجوش انداز میں اتنا بڑا ٹرن آوٹ دیا،نیٹو کے سیکرٹری جنرل نے انتخابات پر عوام کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ \"ہر ایک ووٹ جمہوریت کے لیے ووٹ تھا\"۔بقول ان کے، تمام افغانوں نے، چاہے وہ جوان ہوں یا عمر رسیدہ، اپنے ملک کے مستقبل کے ساتھ اپنے واضح عزم ؛ اور جمہوریت کے بنیادی اصول سے وابستگی کے ساتھ اپنے یقین کا اظہار کیا ہے۔ نیٹو کے سکریٹری جنرل نے کہا کہ یہ بات بھی قابل تعریف ہے کہ یہ انتخابات شڈول کے مطابق کرائے گئے، جس میں امیدواروں، عوام اور میڈیا میں گرمجوشی پر مبنی سیاسی مباحثہ ہوا۔بقول ان کے، مجھے توقع ہے کہ انتخابات کا یہ عمل شفاف اور سب کی شرکت کے ذریعے جاری و ساری رہے گا؛ اور اس کے بہتر نتائج برآمد ہوں گے، جو افغان عوام کے لیے قابلِ قبول ہوں گے۔انھوں نے کہا کہ یہ بات اہمیت کی حامل ہے کہ انتخابی دھاندلی سے متعلق سارے الزامات کا تدارک موجود اداروں کے ضابطوں کے تحت نکالا جائے۔راسموسن نے کہا کہ افغان عوام کو اپنے سلامتی افواج پر فخر کرنا چاہیئے جنھوں نے انتخابات میں امن و امان برقرار رکھنے میں قابل تعریف کردار ادا کیا۔پہلی بار، انھوں نے ہی سکیورٹی کی تمام کارروائی کو سنبھالا، جس کام میں انھوں نے بین الاقوامی سلامتی کی افواج سے بہت ہی مختصر حمایت حاصل کی۔ان کے الفاظ میں، یہ الیکشن حقیقی معنوں میں افغانوں کی قیادت میں منعقد ہوئے، جنھیں افغانوں کے مستقبل کے لیے افغانوں نے ہی یقینی بنایا۔دوسری جانب افغان صدر حام کرزئی نے طالبان شدت پسندوں کی طرف سے دھمکیوں کے باوجود بڑی تعداد میں اپنا حق رائے دہی استعمال کرنے پر افغان عوام کو سراہا ہے۔اپنے بیان میں انھوں نے کہا کہ انتخابات میں عوام کی شمولیت نے \"ہمارے پیارے وطن کو باعزت اور کامیاب بنایا۔افغانستان کے لیے اقوام متحدہ کے خصوصی نمائندے جان کوبس نے بھی افغان عوام کی انتخابات میں بھرپور شرکت کی تعریف کرتے کی۔امریکہ کے وزیردفاع چک ہیگل نے کہا ہے کہ ڈالے گئے ووٹوں کی شرح یہ \"دنیا پر یہ ظاہر کرتی ہے کہ افغان عوام اپنے مستقبل کا فیصلہ خود کرنا چاہتے ہیں۔\"اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے افغان عوام کی بڑی تعداد میں انتخابات میں شمولیت کو سراہتے ہوئے کہا کہ طالبان اور دیگر انتہا پسند گروپوں کی دھمکیوں کے باوجود لوگوں کی شرکت کی قابل تعریف ہے۔

مزید : صفحہ اول